اسکولوں میں گائتری منتر پڑھنے کاکوئی آرڈر نہیں جاری کیا گیا، ایجوکیشن ڈپارٹمنٹ کی وضاحت

demo
پچھلے دنوں شمالی دہلی میونسپل کارپوریشن کے اسکولوں میں صبح کی اسمبلی میں گائتری منتر پڑھنے کے آرڈر جاری ہونے کی بات سامنے آئی تھی۔ اس سلسلے میں دہلی اقلیتی کمیشن کے نوٹس پر شمالی دہلی میونسپل کارپوریشن کے ایجوکیشن ڈپارٹمنٹ نے کمیشن کو بتایاہے کہ گائتری منتر پڑھنے کاکوئی آرڈر نہیں جاری کیا گیا ہے، بلکہ ایک ایڈوائزری (مشورہ) کے طور پر یہ بات ایک سرکلر میں کہی گئی ہے اور اب دوبارہ سارے اسکولوں کو لکھ کر مطلع کیا گیا ہے کہ گائتری منتر صبح کی اسمبلی میں پڑھنے کا ذکر صرف مشورہ کے طور پردیا گیا ہے اوروہ الزامی نہیں ہے۔ کمیشن نے اس سلسلے میں دوبارہ شمالی دہلی میونسپل کارپوریشن کے ایجوکیشن ڈپارٹمنٹ کولکھا ہے کہ ایک کثیر مذہبی اورکثیر ثقافتی سیکولر ملک میں کسی مخصوص منتر کے پڑھنے کوبطور مشورہ بھی نہیں کہنا چاہئے۔ سیکولر اسٹیٹ میں یا تو کسی بھی منتر کوپڑھنے سے روکا جائے یااسکولوں کوہدایت دی جائے کہ مختلف مذہبی کتابوں میں سے وقتافوقتا مناسب اقتباسات لے کر صبح کی اسمبلی میں پڑھایا جائے تاکہ فرقہ وارانہ یکجہتی اورآپسی ملاپ کوتقویت ملے۔ کمیشن نے مزید کہاکہ ہم امید کرتے ہیں کہ مستقبل میں اس طرح کی ایڈوائزری نہیں جاری کی جائے گی، کیونکہ اس طرح کی روایت وقت گزرنے پر مقدس بن جاتی ہے اور اس کوالزامی سمجھا جانے لگتا ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *