پاکستان: مولانا سمیع الحق قاتلانہ حملے میں جاں بحق

maulan-samiul-haq
جمعیت علماء اسلام (س) کے سربراہ مولانا سمیع الحق کو نامعلوم حملہ آوروں نے راولپنڈی میں ان کے گھر کے اندر گھس کر ہلاک کیا۔مولانا سمیع الحق کے پوتے عبدالحق نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ وہ راولپنڈی میں اپنے مکان میں اکیلے تھے جب نامعلوم شخص نے ان کو چھریوں سے وار کر کے ہلاک کر دیا۔راولپنڈی پولیس کے مطابق، مولانا سمیع الحق بحریہ ٹاؤن میں سفاری ون ولاز میں اپنے گھر پر موجود تھے، جب نامعلوم حملہ آور گھر میں داخل ہوئے اور چھریوں کے وار کرکے ان پر قاتلانہ حملہ کیا جس کے نتیجے میں وہ ہلاک ہوئے۔
پاکستانی میڈیارپورٹس کے مطابق، راول پنڈی میں مولانا سمیع الحق اپنے گھر میں قاتلانہ حملے میں شدید زخمی ہونے کے بعد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہوگئے۔ ان کے پوتے مولانا عبدالحق نے بتایا ہے کہ حملہ آوروں سے متعلق کچھ نہیں پتہ چل سکا ہے۔ مولانا سمیع الحق کی نمازِجنازہ بروز ہفتہ مدرسہ اکوڑا خٹک میں ادا کی جائے گی۔ جے یو آئی س کے رہنماؤں نے مولانا سمیع الحق کا پوسٹ مارٹم کروانے سے انکار کردیاہے۔
مولانا سمیع الحق پرحملہ نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کے سفاری ون میں پیش آیا۔ جس وقت یہ واقعہ پیش آیا، مولانا سمیع الحق گھر میں اکیلے تھے اور ان کے ملازم اور گارڈز کھانا لینے گئے ہوئے تھے۔ مولانا سمیع الحق پر پہلے قاتلوں نے چھری کے وار کئے اور پھر فائرنگ کردی۔ مولانا سمیع الحق کو سفاری اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے شہید ہوگئے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *