ہاکی ٹورنامنٹ:اے ایم یو،جے ایم آئی، ڈی یو اور آر ایم ایل یونیورسٹی کوارٹر فائنل میں

hockey-tournament
علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) میں کھیلے جارہے شمالی خطہ مرد ہاکی ٹورنامنٹ کے  میچوں میں میزبان ٹیم علی گڑھ مسلم یونیورسٹی نے ٹورنامنٹ میں اپنا دبدبہ برقرار رکھتے ہوئے کمایوں یونیورسٹی کی ٹیم کو15-1سے شکست دے کر ٹورنامنٹ کے کوارٹر فائنل مقابلہ میں داخلہ حاصل کرلیا ہے۔اس کے علاوہ جامعہ ملیہ اسلامیہ، دہلی یونیورسٹی اور آر ایم ایل یونیورسٹی فیض آباد کی ٹیمیں بھی اپنی حریف ٹیموں کو شکست دے کر ٹورنامنٹ کے کوارٹر فائنل میں داخل ہوگئی ہیں۔میزبان علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی ٹیم کا مقابلہ20؍نومبر2018 بروز منگل ایم ڈی یو روہتک سے ہوگا جبکہ جامعہ ملیہ اسلامیہ کا مقابلہ پی یو چنڈی گڑھ، دہلی یونیورسٹی کا مقابلہ گرو نانک دیو یونیورسٹی امرتسر اور آر ایم ایل یونیورسٹی فیض آباد کا مقابلہ پنجابی یونیورسٹی پٹیالہ سے ہوگا۔
علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی ٹیم نے آج کھیلے گئے میچ میں کمایوں یونیورسٹی نینی تال کی ٹیم کو15-1سے شکست دے کر ٹورنامنٹ میں مسلسل دوسری فتح درج کی۔ اے ایم یو کے کھلاڑی محمد فراز اور نوید علی خاں نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے چار چار گول کئے جبکہ سونو کمار نے تین، لاکیش نے دو اور اختب و زبیر نے ایک ایک گول کیا۔کمایوں یونیورسٹی کی جانب سے ایک واحد گول وجے کشور نے کیا۔دہلی یونیورسٹی نے لکھنؤ یونیورسٹی کو8-0سے شکست دی۔ وبھانشو نے تین، پلکت نے دو اور پروین منڈا،آشیش اور نوید نے ایک ایک گول کیا۔
آر ایم ایل اودھ یونیورسٹی فیض آباد نے ایک دلچسپ و سخت مقابلہ میں کروکشیتر یونیورسٹی کی ٹیم کو 3-2سے شکست دی فیض آباد کی جانب سے ابھیشیک، انشومن اورسونو کمار نے ایک ایک گول کیا جبکہ کروکشیتر کی جانب سے گگن دیپ اور ساحل نے ایک ایک گول کیا۔جامعہ ملیہ اسلامیہ کی ٹیم کو چودھری دیوی لعل یونیورسٹی سرسا کی ٹیم کے نہ آپانے کے سبب واک اوور مل گیا۔
آج کے میچوں کے مہمانِ خصوصی ویمنس کالج کی پرنسپل پروفیسر نعیمہ گلریز،گیمس کمیٹی کے سابق سکریٹری پروفیسر شعیب ظہیر اور ڈینٹل کالج کے ممتاز معالج دنت پروفیسر ایس کے مشرا تھے۔اس موقع پر گیمس کمیٹی کے سکریٹری پروفیسرایس امجد علی رضوی، ہاکی کلب کے صدر ڈاکٹر غلام سرور ہاشمی کے علاوہ ڈپٹی ڈائرکٹر اسپورٹس انیس الرحمن خاں اور اسسٹنٹ ڈائرکٹر اسپورٹس ارشد محمود وغیرہ بھی موجود تھے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *