مغل شہنشاہ بہاد ر شاہ ظفر کی یادمیں مذاکرہ اور تقسیم ایوارڈ

zafar-anwar
مغل حکمراں بہادر شاہ ظفر کی یا د میں غالب اکیڈمی کی ایک پروقار تقریب میں انہیں اور ان کے رفقاء جہاد آزادی کونہ صرف خراج عقیدت پیش کیاگیابلکہ حکومت ہند سے یہ مطالبہ بھی کیاگیا کہ جلاوطنی میں انتقال کرنے والے شہنشاہ ہند کے مزار کو رنگون سے مہرولی منتقل کیا جائے کیونکہ بادشاہ سلامت نے اپنی زندگی میں ہی مہرولی کے علاقہ میں اپنی قبر تعمیر کرالی تھی لیکن ظالم انگریزو ں نے نہ صرف ان کو رنگون میں جلاوطن کردیا بلکہ انکے سامنے ان کے دوشہزادوں کاسرکاٹ کرطشت میں پیش کردیا۔یہ بات بہاد رشاہ ظفر مرحوم کے پڑپوتے نواب شاہ محمد شعیب خاں نے اپنے خطاب کے دوران کہی ۔کل 7نومبر کوصبح ساڑھے چھ بجے مسجد بھوری بھٹیاری نزد آئی ٹی او میں ان کے ایصال ثواب کیلئے قرآن خوانی کی گئی جبکہ ساڑھے دس بجے دن سے شام کے پانچ بجے تک غالب اکیڈمی میں انہیں خراج عقیدت پیش کرنے کے ساتھ درجنوں اصحاب علم ودانش نے ان کی زندگی اورخدمات پر سیر حاصل روشنی ڈالی ۔سمینا خان نے مغل شہنشاہ بہادرشاہ ظفر اور مجاہدین آزادی کے اوپرروشنی ڈالی۔قاضی انیس الحق نے نظامت کے فرائض انجام دیئے۔
اس موقع پر مختلف شعبۂ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے ممتاز افراد کوبہاد ر شاہ ظفر ایوارڈ سے بھی نوازا گیا جوشال اور مومنٹو پر مشتمل ہے ۔ان میں سماجی کارکن اورپبلشرگرڈ کی سربراہ محترمہ مہہ جبین عمر،صحافی ظفر انور،ایڈوکیٹ راجہ راؤ چندرسین راٹھور ،نتیش کمار شاہ،ڈاکٹر محمد حنیف خاں شاستری وغیر ہ شامل تھے ۔ایوارڈ پیش کرنے والو ں میں ڈاکٹر خواجہ افتخار اور شعیب خاں شامل تھے جبکہ خصوصی مقررین میں مولانا عطاء الرحمن قاسمی ،مولانا مزمل صاحب ،ڈاکٹر حاجی پرویز میاں اور دیگر حضرات شامل تھے جبکہ شرکاء میں عمائدین شہر کی بڑی تعداد موجودتھی جن میں سید ضیاء الرحمن غوثی ،ڈاکڑعبدالواسع ،ڈاکٹروسیم اختر ،اشہر ہاشمی ،الحاج اسرار قریشی ،حضرت شیخ عبدالحق محدث دہلوی کی درگاہ کے متولی اورسجادہ نشیں سید منظور الحق حقی ،راشدالاسلام ،نریندر کمار،گلزار احمد،صادقین قریشی ،قاضی انیس الحق بنگلور، للت سمن ڈی آئی ڈی نیوز، راجانرویرسنگھ، روی نتیش، ڈاکٹر رمیش کمار پاسی، ڈاکٹرسہاب سنگھ بھٹی، محمدفیصل،ڈاکٹر عقیل احمداور دیگر لوگ موجودتھے ہال سامعین سے کھچاکھچ بھراہواتھا جس میں پردہ نشیں خواتین کے علاوہ بہت سے غیر مسلم دانشوران بھی موجود تھے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *