مسلم خواتین کی قیادت کو فروغ دینے کیلئے ’نئی روشنی‘اسکیم ورکشاپ اختتام پذیر

lko
لکھنؤ:مرکزی حکومت کی اقلیتی امور کی وزارت کی طرف سے چلنے والیمسلم خواتین کی قیادت کو فروغ دینے کے لئے ’نئی روشنی‘اسکیم ورکشاپ کا آج اختتام ہوگیا ۔یہ ٹریننگ ’تکنیکی شکشا اور جن کلیان سنستھان‘ کے زیراہتمام’ لرننگ بینچ کیمپس ،عنبر گنج سعادت گنج میں اختتام پزیر ہوا۔ 6 روزہ ٹریننگ کے ساتھ، ہرمستفیدین کو 600.00 روپے اسکالرشپ بھی دی گئی۔ سنستھان کے ڈائریکٹر محمد انیس نے کہا کہ خواتین کا تعلیم یافتہ ہونا اور سماجی و سیاسی میدان میں قدم رکھنا ضروری ہے، جس سے وہ گھر خاندان اور سماج کو صحیح سمت دے سکیں۔
اس پروگرام کا افتتاح علاقائی کارپوریٹر کے شوہر اور سابق کارپوریٹر محمد احسان نے کیا۔انہوں نے خواتین کو تعلیم حاصل کرنے اور سماجی معلومات لینے پر زور دیا۔ساتھ ہی اس پروگرام کی تعریف کرتے ہوئے ایسے پروگرام باربار کرنے پر زور دیا۔اس پروگرام میں وقف ڈیولپمنٹ کارپوریشن کے ڈائریکٹر شفاعت حسین نے تفصیل سے اقلیتی خواتین کیلئے مرکزی حکومت کی جانب سے چلائی جا رہی اسکیموں کی معلومات دی اور سیاسی و سماجی میدان میں کس طرح آگے بڑھیں اس کے راستے بتائے، انہوں نے یہ بھی بتایا کہ اتر پردیش جیسی بڑی ریاست میں سیاسی میدان میں مسلم خواتین کا فیصد بڑھانے کی کوئی ضرورت ہے۔ انہوں نے ٹریننگ پوری کرنے والی مسلم خواتین کو سرٹیفکیٹ بھی تقسیم کئے۔
واضح ہو کہ 8 اکتوبر سے 13 اکتوبر تک چلنے والی اس ٹریننگ میں انچارج انسپکٹر سعادت کوتوالی مسٹر نیرج اوجھا اور عنبر گنج چوکی انچارج شرون چند، گڑھی پیر خاں وارڈ کے کارپوریٹرمسٹر عزیزالرحمان خان، سماجی کارکن اور نیو سٹی ہاسپٹل اور ٹراما سینٹر کے مسٹر شفاین قریشی، صحافی محمد انعام خان، مسٹر جنید خان پٹھان، مسٹر ارشد رضا ، سید علیم قادری اور سماجی کارکن مسز نور فاطمہ موجود رہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *