فاروق عبد اللہ کے بعد اب محبوبہ مفتی نے بھی کیاپنچایت الیکشن بائیکاٹ کا اعلان،کہا!’موت تک لڑیں گے 35اے کی لڑائی‘

mufti
جموں وکشمیر میں نیشنل کانفرنس کے بعد اب پی ڈی پی نے ریاست میں پنچایت الیکشن بائیکاٹ کرنے کا اعلان کیاہے۔پی ڈی پی نے بھی آرٹیکل 35اے کا حوالہ دیتے ہوئے الیکشن سے دوررہنے کا اعلان کیاہے۔جموں وکشمیرکی سابق سی ایم محبوبہ مفتی نے پیرکوپی ڈی پی کی ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ کے بعد ریاست میں آرٹیکل 35اے کوبرقراررکھنے کی حمایت کی ہے۔محبوبہ مفتی نے کہاکہ وہ آخری سانس تک جموں وکشمیرکے خصوصی درجے کوبنائے رکھنے کی لڑائی لڑیں گی، کیونکہ آرٹیکل 35اے کے تحت ملاخصوصی درجہ ریاست کے ہرشخص کی زندگی سے متعلق موضوع ہے۔ سری نگر میں ایک پریس کانفرنس کے دوران محبوبہ مفتی نے کہا کہ جب تک مرکزی حکومت اس موضوع پریعنی دفعہ 35 اے اپنا موقف واضح نہیں کرے گی ، تب تک پی ڈی پی بھی پنچایت الیکشن کا بائیکاٹ کرے گی۔اس کے علاوہ ریاست کی خصوصی درجہ کوبرقراررکھنے کیلئے ہرمورچے پرلڑائی جاری رہے گی۔
بہرکیف محبوبہ مفتی نے بھی ریاست میں ہونے جارہے پنچایت انتخابات سے دور رہنے کا اعلان کیا ہے۔ محبوبہ مفتی نے کہا کہ پنچایت الیکشن اور سپریم کورٹ میں دفعہ 35 اے کو لے کر چل رہے کیس کے آپسی تعلق کو لے کر جس طرح کی باتیں سامنے آرہی ہیں ، اس سے لوگوں کے دماغ میں کئی طرح کے شکوک و شہبات پیدا ہوگئے ہیں ، ہم مرکزی حکومت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ ایسے ماحول میں الیکشن کرانے کے فیصلہ پر ایک مرتبہ پھر سے غور کیا جائے۔ اس صورتحال میں انتخابات ہوئے تو پی ڈی پی بھی اس میں شریک نہیں ہوگی۔
خیال رہے کہ اتوار کو بھی محبوبہ نے اس بات کا اشارہ دیا تھا کہ اگر مرکزی حکومت دفعہ 35 اے سے چھیڑ چھاڑ کرتی ہے ، تو ان کی پارٹی بھی جموں و کشمیر میں سبھی الیکشن کا بائیکاٹ کرسکتی ہے۔ اس سے پہلے نیشنل کانفرنس کے فاروق عبد اللہ نے بھی پنچایت انتخابات اورپھر اسمبلی اور لوک سبھا انتخابات کے بائیکاٹ کا اعلان کیا تھا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *