طالبہ نے لگایا پرنسپل پرسنگین الزام، جان کرہوجائیں گے حیران

sonipat
ہریانہ کے سونی پت میں ایک سرکاری اسکول سے حیران کرنے والا معاملہ سامنے آیاہے۔ایک طرف جہاں سرکار ’بیٹی بچاؤ بیٹی پڑھاؤ‘ کا نعرہ دے رہی ہے، وہیں ٹیچراس معاملے کوبرعکس کررہے ہیں۔دراصل،اسکول کی ایک طالبہ نے ضلع ایجوکیشن افسر کوشکایت کی ہے کہ پرنسپل طالبات کواسکول سے باہرہوٹلوں میں بھیجتے ہیں۔طالبہ نے پرنسپل پرطالبات سے جبراً غلط کام کروانے کا الزام بھی لگایاہے۔رپورٹوں کے مطابق، طالبہ کی شکایت ملتے ہی انتظامیہ میں افراتفری مچ گئی۔ آناً فاناً میں پرنسل کے خلاف ایف آئی آردرج کی گئی اورایس آئی ٹی کی تشکیل کرکے پورے معاملے کی جانچ شروع کردی گئی ۔شکایت کرنے والی طالبہ نے ضلع ایجوکیشن افسرکے سامنے بیان دیا ہے کہ اسکول پرنسپل طالبات کوباہر بھیجتے ہے اوراسکول میں بھی غلط کام کیاجاتاہے۔طالبات نے ٹیچرس ڈے کے موقع پرضلع ایجوکیشن افسرسے شکایت کی تھی۔اب یہ معاملہ طول پکڑتا جارہاہے۔
سونی پت کے سب ڈویزن کھرکھودا کے ایک سرکاری اسکول کی طالبات نے ٹیچروں کے کالے کرتوت کواجاگرکردیاہے۔جب معاملے کاسونی پت ضلع ایجوکیشن افسرکوپتہ چلاتووہ لڑکیوں کے اسکول پہنچے۔ جب انہو ں نے لڑکیوں کی بات کی تولڑکیوں کی بات سن کردنگ رہ گئے۔ طالبات ایجوکیشن افسرکوبتایاکہ اسکول کے ہیڈماسٹر لڑکیوں کا ہاتھ پکڑتاہے، ڈبل میننگ میں بات کرتاہے۔ طالبات کا الزام ہے کہ ہمارے اسکول کے ہیڈ ماسٹرکا لڑکیوں کے ساتھ سلوک بالکل ٹھیک نہیں ہے۔
حالانکہ اس معاملہ میں پرنسل نے سازش کا الزام لگایاہے۔ پرنسپل کا کہناہے کہ اسکول کی بچیوں کوان کے خلاف بھڑکایاگیاہے، اسلئے ایساہورہاہے اوروہ کسی بھی جانچ کیلئے تیار ہے۔
معاملے کی اطلاع ملتے ہی پولس نے تیزدکھاتے ہوئے ایف آئی آر درج کرلی اورایک خاتون ڈی ایس پی اورخاتون انسپکٹر سمیت چارافسروں کی ٹیم جانچ میں لگادی ۔حالانکہ ابھی تک کسی کے خلاف ایکشن نہیں لیاگیاہے۔ لیکن جانچ میں قصوروارپائے جانے پر پولس سخت کارروائی کی بات کررہی ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *