ہم جنسی پرستی معاملہ:سپریم کورٹ کے فیصلے پرمتعددشہروں میں جشن ،دیکھیں ویڈیوز

سپریم کورٹ نے ملک میں ہم جنس پرستی کو جرائم کے زمرے سے خارج کرنے کا تاریخی فیصلہ سنا دیا ہے۔ اس فیصلے کے تحت اب ملک میں ہم جنس پرستوں کا جنسی تعلق جرم نہیں رہا ہے۔سپریم کورٹ نے دفعہ 377پرتاریخی فیصلہ سناتے ہوئے کہاکہ آپسی رضامندی سے بنے تعلقات(ہم جنس پرستی ) جرم نہیں ہے۔لیکن دفعہ 377کے تحت جانوروں سے جنسی تعلقات جرم بنارہے گا۔سپریم کورٹ کی پانچ ججوں کی بینچ نے ہم جنس پرستی کو جرم کے زمرے سے باہر کر دیا ہے۔

ادھرسپریم کورٹ کے فیصلے آنے کے بعد ہم جنسی پرستی کوچاہنے والے افراد جشن منارہے ہیں۔دہلی ، ممبئی ،چنئی،کرناٹک ، بنگلوروسمیت دیگرشہروں میں جشن منارہے ہیں۔ایک دوسرے کومٹھائیاں تقسیم کررہے ہیں، آپ ویڈیوزاورتصاویر میں دیکھ سکتے ہیں۔

بہر کیف آپسی اتفاق سے ہم جنس پرستی کو جر م قرار دینے والی آئی پی سی کی دفعہ 377 کو آئینی جواز کو چیلنج والی عرضیوں پر سپریم کورٹ نے بڑافیصلہ سنا دیا ہے۔ سیکشن 377 پر فیصلہ سناتے ہوئے چیف جسٹس دیپک مشرا نے کہا کہ سماجی اخلاقیات کی آڑ میں دوسروں کے حقوق کی خلاف ورزی کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔ سپریم کورٹ نے اپنے فیصلہ میں کہا ہے کہ دو بالغ افراد کے درمیان باہمی رضامندی سے بنائے گئے تعلق کو جرم کے زمرے میں نہیں رکھا جا سکتا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *