بی جے پی کی دوروزہ نیشنل ایگزیکٹیوکی میٹنگ شروع

amit-shah
بھارتیہ جنتاپارٹی(بی جے پی) آنے والے لیکشن کی تیاریوں کولیکرکمرکس کرتیارہے۔بی جے پی کی دوروزہ نیشنل ایگزیکٹیوکی میٹنگ آج شروع ہوگئی ہے۔ میڈنگ میں قومی نائب صدر،جنرل سکریٹری، تنظیم سے وابستہ عہدیدار، ریاستی صدور، صوبائی کمیٹی کے جنرل سکریٹری وغیرہ حصہ لے رہے ہیں۔دہلی کے امبیڈکر بین الاقوامی سینٹر میں پارٹی صدر امت شاہ نے اس کی شروعات کی۔میٹنگ میں لوک سبھا اور کچھ ریاستوں میں اسمبلی انتخابات کی حکمت عملی،تنظیمی صورتحال کا جائزہ ، پارٹی کی توسیع، حکومت کی ترقی اور عوامی فلاح کے منصوبوں پر عملدرآمد کی صورت حال پر غورو خوض کیا جائے گا۔سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی کے انتقال کے بعد پہلی بار ہونے والی پارٹی کی اس اولین میٹنگ میں ان کی شخصیت اور کاموں پر فوکس کیا گیا۔
ذرائع کے مطابق، میٹنگ میں انتخابات پرغوروخوض کے ساتھ رافیل سودے پر اپوزیشن کے حملے اورتیل کی اضافی قیمتوں پربھی تبادلہ خیال کیا جائے گا۔پارٹی ذرائع کے مطابق اجلاس میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ اور روپے کی گرتی قدر کو لے کر حکومت پر اپوزیشن پارٹیوں کے ہو رہے حملوں کا معقول جواب دینے کی حکمت عملی بھی طے کی جائے گی۔مدھیہ پردیش، راجستھان ، چھتیس گڑھ اورمیزورم کے علاوہ اب تلنگانہ کے بھی الیکشن کی تیاریوں پربھی غوروخوض کیاجائے گا۔ بی جے پی پوری طرح سے انتخابی تیاریوں کیلئے کمرکس لی ہے۔
اس موقع پرامت شاہ نے تنظیم کو مضبوط بنانے، حکومت کی منصوبہ بندی کے عمل میں تیزی لانے اور اس کا پرچار زمینی سطح تک کرنے اور انتخابات کی تیاری بوتھ سطح پر کرنے پر زور دیا۔امت شاہ نے عہدیداروں کے ساتھ میٹنگ میں دعویٰ کیاہے کہ تین ریاستوں میں ہونے والے الیکشن اورلوک سبھا الیکشن میں بی جے پی کی جیت طے ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *