اپوزیشن کے بندکا اثر، بھارت بند کے دوران توڑ پھوڑ

protest
پیٹرول-ڈیزل کی آسمان چھوتی قیمتوں کے خلاف کانگریس سمیت دیگراپوزیشن پاٹیوں نے آج ’بھارت بند‘ کا اعلان کیاہے۔بھارت بند کا اثربھی دیکھنے کومل رہاہے۔ بندکے دوران ملک بھرسے الگ الگ تصویریں سامنے آرہی ہیں۔ بہارمیں مظاہرین نے تھوڑپھوڑکی ہے۔ کئی جگہ آگ زنی بھی ہوئی ہے۔ اس کے علاوہ ٹرینوں کوروکا گیاہے۔بیگوسرائے میں بندکے دوران مظاہرین نے اسٹیشن پرٹرین روک کرسرکارکے خلاف نعرے بازکی۔
protest-bihar
پٹنہ کے ڈاک بنگلہ چوراہے پر مظاہرین نے ٹریفک کو بلا ک کردیا۔اس دوران بند حامیوں نے کئی گاڑیوں کے شیشے توڑ دیئے۔بند کے دوران داناپور، بیلی روڈ، منیر میں سڑک پر ٹائر جلا کر ٹریفک کو متاثر کیا گیا۔گیا، جہان آباد، دربھنگہ، کٹیہار، سمستی پور، ارریہ، کشن گنج سمیت تقریبا تمام اضلاع میں بند کا وسیع اثر دیکھا جا رہا ہے۔
بھارت بند کی حمایت میں کانگریس، راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی)، ہندوستانی عوام مورچہ (ہم)، جن ادھیکار پارٹی (جاپ)، سماج وادی پارٹی (ایس پی) اور لوک تانترک جنتا دل کے لیڈرز اور کارکنان صبح سے ہی سڑکوں پر اتر آئے اور جگہ جگہ سڑک اور ریل ٹریفک اور دکانوں کو بند کرانے کی کوشش کرنے لگے۔ اسی دوران جاپ کے کارکنوں نے راجندر نگر ٹرمینل پر مشرقی وسطی ریلوے کے ملازمین کو حاجی پور لے جانے والی بس کے شیشے توڑ دیئے۔ وہیں، نالندہ میڈیکل کالج جا رہے ایک ڈاکٹر کے ساتھ بندحامیوں نے بدسلوکی کی۔
پٹرول، ڈیزل اور رسوئی گیس کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کے خلاف کانگریس کے اعلان پر اپوزیشن پارٹیوں کے بھارت بند کے دوران کئی مقامات پر بند حامیوں نے توڑ پھوڑ کی۔
بھارت بند میں دہلی ،بہار، اوڈیشہ، کرناٹک، مغربی بنگال، گوا، مدھیہ پردیش، مہاراشٹرا، تمل ناڈو، ہریانہ، کیرالہ اور تلنگانہ ودیگرریاستیں شامل ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *