مشیل جانسن: کرکٹ کے سبھی فارمیٹ سے ہوئے ریٹائر

mitchell-johnson
آسٹریلیا کے بائیں ہاتھ کے تیز گیند باز 36 سالہ مشیل جانسن نے کرکٹ کے سبھی فارمیٹ سے ریٹائرہونے کا اعلان کردیاہے۔ حالانکہ وہ انٹرنیشنل کرکٹ سے تین سال قبل وداعی لے چکے تھے لیکن کچھ فارمیٹ میں وہ ابھی تک کھیل رہے تھے۔ گزشتہ مہینوں ہوئی انڈین پریمئر لیگ میں بھی انھوں نے حصہ لیا تھا۔ حال ہی میں انھوں نے کہا کہ ان کے جسم نے گیند بازی میں ساتھ دینا بند کردیا ہے،اس لیے وہ کرکٹ کے سبھی فارمیٹ سے ریٹائر منٹ لے رہے ہیں۔
مشیل جانسن نے حالانکہ انٹر نیشنل کرکٹ کو بہت پہلے وداع کہہ دیا تھا۔ گزشتہ مہینے ٹوینٹی 20- بگ بیش لیگ کی ٹیم پرتھ اسکورچرس کو بھی چھوڑ دیا تھا لیکن انڈین پریمئر لیگ یا دیگر گھریلو ٹی 20- ٹورنامنٹ میں کھیلنے سے انکار نہیں کیا تھا لیکن اچانک انھوں نے ایک نیوز ویب سائٹ میں لکھا،’اب سب ختم ہوگیا ہے۔ میں نے اپنی آخری گیند پھینک دی۔ اپنا آخری وکٹ لے لیا۔ آج میں کرکٹ کے سبھی فارمیٹ سے ریٹائر ہونے کا اعلان کرتا ہوں۔ ‘ انھوں نے مزید لکھا ، ’ میں نے پوری دنیا میں مختلف ٹی 20- ٹورنامنٹ میں کھیل جاری رکھنے کی امید کی تھی شاید اگلے سال کے وسط تک لیکن میرے جسم نے اب جواب دینا شروع کردیا ہے۔‘
آسٹریلیا کے مایہ ناز تیز گیند باز مشیل جانسن کو اچھی گیند بازی کے لیے ہمیشہ یاد کیا جائے گا۔ وہ 140 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گیند پھینک کر اچھے اچھے بلے بازوں کو دفاعی کھیل کھیلنے پر مجبور کردیتے تھے۔ خاص طورسے انگلینڈ کے خلاف کھیلی جانے والی ’ایشیز سیریز ‘ میں ان کی کارکردگی کو طویل عرصے تک یاد کیا جائے گا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *