کالج کی 12 لڑکیوں کے ساتھ جنسی زیادتی کے الزام میں رکن پارلیمنٹ کا بیٹاگرفتار

rape
برسراقتدار ٹی آرایس کے رکن پارلیمنٹ ڈی سری نواس کے بیٹے سنجے کونظام آبادمیں اپنے کالج کی 12طالبات کے ساتھ جنسی زیادتی کے الزام میں گرفتارکیاگیاہے۔یہ جانکاری پولس نے پیرکودی ۔سنجے کواتوارکواس وقت گرفتارکرکیاگیاجب وہ نظام آبادکے (ایس پی )ایم سدرشن کے سامنے پوچھتاچھ کیلئے پیش ہواتھا۔ پولیس نے بتایا کہ گرفتاری کے بعد سنجے کوایک مقامی عدالت میں پیش کیا گیا، جس کے بعداسے 24 اگست تک کے لئے عدالتی حراست میں بھیج دیا۔
نظام آباد کے اسسٹنٹ کمشنر پولیس ایم سدرشن نے کہا کہ ،’’ سنجے پر 12 لڑکیوں کے جنسی استحصال اور کالج کیمپس اور دوسرے مقامات پر فحش سلوک کرنے کا الزام ہے‘‘۔اس مہینے کے آغاز میں،نظام آباد میں ایک کالج کی بی ایس سی میں پڑھنے والی 12 طالب علموں نے ریاستی وزیر داخلہ نینی نرسنگھ ریڈی کے سامنے ملزم کے خلاف شکایت درج کراتے ہوئے ہراساں کرنے اور جنسی زیادتی کا الزام لگایا گیا تھا۔پولس نے بتایاکہ شکایت کے بعدآئی پی سی سے متعلق دفعات کے تحت اس کے خلاف کیس درج کیاگیا۔کیس درج ہونے کے بعدسے سنجے فرارچل رہاتھا۔اس نے پیشگی ضمانت کیلئے عرضی داخل کی تھی جسے عدالت نے خارج کردیاتھا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *