کروناندھی کے آخری دیدار کے لئے لوگوں کا ہجوم،بھگدڑمیں40افرادزخمی

Tamil-Nadu
 تامل ناڈو کے سابق وزیراعلی اور ڈی ایم کے صدر ایم کروناندھی کا جسدخاکی بدھ کی صبح راجاجی ہال میں رکھا گیا ہے جہاں ان کے آخری دیدار کے لئے لوگوں کی زبردست بھیڑ جمع ہے۔ان کی آخری دیدارکیلئے لوگ بڑی تعدادمیں پہنچ رہے ہیں۔خبرہے کہ پولس ہجوم پرقابوپانے کی کوشش کررہی ہے لیکن بھیڑبے قابوہوگئی۔جس کے بعد پولس کوبھیڑکوکنٹرول کرنے کیلئے لاٹھی چارج کرناپڑا۔اس کے بعد وہاں بھگدڑ مچ گئی۔بھگدڑمیں 40سے زائدافراد زخمی ہوگئے ہیں۔پولس نے لوگوں کوامن بنائے رکھنے کی اپیل کی ہے۔
ریاست کے گورنر بنواری لال پروہت نے راجاجی ہال جاکر آنجہانی لیڈر کو گلہائے عقیدت پیش کئے۔ انہوں نے ڈی ایم کے ایگزیکٹو چیئرمین ایم کے اسٹالن سے بھی کچھ دیر گفتگو کی۔واضح رہے کہ گزشتہ 11 دنوں سے اسپتال میں داخل مسٹر کروناندھی کا کل شام چھ بجکر 10 منٹ پر انتقال ہوگیا ہے۔ مرکزی حکومت نے ان کے تئیں تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے ایک دن کے قومی سوگ جبکہ ریاست نے ایک ہفتے کے سوگ کا اعلان کیا ہے نیز قومی پرچم آدھا جھکا رہے گا۔ اس دوران سبھی سرکاری تقریبات ملتوی کردی گئی ہیں۔
بہرکیف انتقال کے بعد کروناندھی کا جسد خاکی پہلے گوپال پورم میں واقع ان کی رہائش گاہ لایا گیا تھا جہاں سے ان کی بیٹی اور راجیہ سبھا کی ممبر پارلیمنٹ کنی موجھی کے گھر لے جایا گیا لیکن لوگوں کے ہجوم کے پیش نظر ان کا جسد خاکی ترنگے میں لپیٹ کر راجاجی ہال میں رکھا گیا ہے جہاں لوگ ان کا آخری یدار کررہے ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *