پاکستانی بلے باز فخرالزماں نے بنایا عالمی ریکارڈ 

fakhar-zaman
پاکستان کے بلے باز فخرالزماں نے ونڈے انٹرنیشنل کرکٹ میں سب سے تیز 1000 رن بناکر عالمی ریکارڈ قائم کیا۔ انھوں نے 18 میچوں کی 18 پاریاں کھیل کر یہ عالمی ریکارڈ بنایا۔ اس کے علاوہ زمبابوے کے خلاف پانچ میچوں کی ونڈے سیریز میں فخرالزماں نے 515 رن بناکر مین آف دی سیریز کا خطاب بھی اپنے نام کیا۔ یہ کارنامہ انجان دے کر وہ پانچ ونڈے میچوں کی پانچ پاریوں میں 500سے زیادہ رن بنانے والے عالمی کرکٹ کے پہلے بلے باز بن گئے۔
زمبابوے کے ساتھ کھیلی گئی پانچ میچوں کی ونڈے سیریز میں فخرالزماں پہلے میچ میں60 رن بناکر آؤٹ ہوئے۔ دوسرے میچ میں انھوں نے ناٹ آؤٹ 117 رن بنائے۔ تیسرے میچ میں مخالف ٹیم کا ہدف بہت کم تھا، اس لیے انھیں زیادہ رن بنانے کا موقع نہیں ملااور انھوں نے آؤٹ ہوئے بغیر 43 رن بنائے۔ چوتھے میچ میں فخرالزماں نے ڈبل سنچری اسکور کی۔ انھوں نے ناٹ آؤٹ 210 رن بناکر ونڈے کرکٹ میں ڈبل سنچری بنانے والے پہلے پاکستان کھلاڑی ہونے کا اعزاز حاصل کیا۔پانچویں اور آخری میچ میں فخرالزماں 85 رن بناکر آؤٹ ہوئے۔ اگر وہ اس پاری میں بھی سنچری لگالیتے تو وہ ونڈے انٹر نیشنل کرکٹ میں ڈبل سنچری کے بعد سنچر ی لگانے والے دنیا کے پہلے بلے باز بن جاتے۔
اس طرح فخرالزماں ونڈے انٹر نیشل کرکٹ میں ڈبل سنچری لگانے والے دنیا کے چھٹے اور پاکستان کے پہلے بلے باز بن گئے۔ اس سے قبل ونڈے انٹرنیشنل کرکٹ میں پاکستان کی جانب سے سعید انور نے 1997 میں ہندوستان کے خلاف چنئی میں197 رنوں کی پاری کھیلی تھی۔پاکستان کے کسی بھی کھلاڑی کا یہی سب سے بڑا انفرادی اسکو رتھا، جسے فخرالزمان نے 21 سال بعد ناٹ آؤٹ 210 رن بناکر توڑا۔
ونڈے کرکٹ میں ڈبل سنچری لگانے والے بلے باز
فخرالزماں سے قبل ونڈ ے انٹرنیشنل کرکٹ میں ڈبل سنچری لگانے والے بلے باز اس طرح ہیں:
سچن تندولکر200 رن ،24فروری2010جنوبی افریقہ کے خلاف۔ روہت شرما209 رن،2نومبر2013 آسٹریلیا کے خلاف۔روہت شرما 264رن 14نومبر 2014 سری لنکا کے خلاف۔ وریندر سہواگ219رن، 8دسمبر2011ویسٹ انڈیز کے خلاف۔ کرس گیل 215رن ، 24فروری2015زمبابوے کے خلاف۔ مارٹن گپٹل237 رن ناٹ آؤٹ،22مارچ 2015ویسٹ انڈیز کے خلاف۔
ونڈ ے کرکٹ میں فخرالزماں نے پانچ میچوں کی سیریز میں515 رن بنائے۔ ان سے پہلے یہ ریکارڈ ان کے ہی ہم وطن محمد یوسف کے نام تھا۔ یوسف نے سال 2002 میں زمبابوے کے خلاف سیریز کی چار اننگز میں 141رن ناٹ آوٹ، 76 رن ناٹ آوٹ، 100رن ناٹ آوٹ اور 88 رن کی اننگز کھیلنے کے ساتھ کل 405 رن بنائے تھے۔ بہرحال، 16 برسوں کے طویل عرصہ کے بعد ان کا یہ ریکارڈ ٹوٹ گیا۔
21 ونڈے میں1000 رن بنانے والے 5بلے باز
فخرالزماں سے پہلے یہ ریکارڈ ویسٹ انڈیز کے ووین رچرڈزکے نام درج تھا۔ انھوں نے 22 جنوری 1980 کو اپنی 21 ویں پاری میں1000 رن بنائے تھے۔ ان کے بعد انگلینڈ کے کیون پیٹرسن اور جوناتھن ٹراٹ ، جنوبی افریقہ کے کیونٹن ڈیکاک اور پاکستان کے بابر اعظم بھی 21 پاریوں میں1000 رن بناچکے ہیں۔ فخرالزماں نے لگاتار 5 ونڈے میں257.5 کی اوسط سے 515 رن بنائے۔ اس دوران وہ 3 بار ناٹ آؤٹ رہے۔ انھوں نے زمبابوے کے ہیملٹن مسکادجا کے لگاتار 5 ونڈے میں467 رن بنانے کا ریکارڈ بھی توڑا۔
کم پاریوں میں1000 رن بنانے والے کھلاڑی 
کھلاڑی ملک پاری 1000واں رن کس کے خلاف جگہ ڈیبیو کے کتنے دن بعد
فخرالزماں پاکستان 18 زمبابوے بلوایو 1 سال 113 دن
ووین رچرڈز ویسٹ انڈیز 21 انگلینڈ سڈنی 4 سال 229 دن
کیون پیٹرسن انگلینڈ 21 ہندوستان فرید آباد 1 سال 123 دن
جوناتھن ٹراٹ انگلینڈ 21 آئر لینڈ بنگلور 1 سال 187 دن
کونٹن ڈیکاک جنوبی افریقہ 21 زمبابوے بلوایو 1 سال 212 دن
بابر اعظم پاکستان 21 آسٹریلیا پر تھ 1 سال 233 دن
گارڈن گرینج ویسٹ انڈیز 23 انگلینڈ لیڈس 4 سال 352 دن
ریان ٹین ڈیسکاٹے نیدر لینڈ 23 افغانستان ایمسٹلوین 3 سال 59 دن
اظہر علی پاکستان 23 سری لنکا کولمبو 4 سال 50 دن
گلین ٹرنر نیوزی لینڈ 24 آسٹریلیا ایڈیلیڈ 9 سال 354 دن
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *