آسام این آرسی: ٹی ایم سی کے 8لیڈروں کوآسام ایئرپورٹ پرحراست میں لیا گیا

tmc
آسام میں این آرسی کادوسرا ڈرافٹ آنے کے بعد سے سیاسی گھمسان مچاہواہے۔این آرسی آسام کے 40لاکھ لوگوں کوباہرکئے جانے کے بعد سے معاملہ اورگرماگیاہے۔ این آرسی پرسڑک سے لیکرپارلیمنٹ تک سیاسی لڑائی جاری ہے۔ترنمول کانگریس کے 8لیڈروں کوآسام کے سلچراےئرپورٹ پرروکا گیا اورپھرانہیں حراست میں لے لیاگیاہے۔ان میں سے 6ارکان پارلیمنٹ اور2رکن اسمبلی شامل ہیں۔سلچرمیں ایک پروگرام میں شامل ہونے جارہے ٹی ایم سی کے آٹھ رکنی وفد کوآج دوپہرتقریباً دوبجے اےئرپورٹ پہنچا تھا۔بتایاجارہاہے کہ یہ سبھی لیڈران نوگاؤں اورگوہاٹی بھی جانے والے تھے۔
بتایاجارہے کہ حراست میں لئے گئے لیڈران این آرسی کے معاملے پرسلچرمیں ایک اجلاس کرنا چاہتے تھے ۔انہیں اےئرپورٹ سے نکلنے نہیں دیاگیا۔آسام کی باراک گھاٹی اورسلچر میں پہلے ہی سے دفعہ 144نافذہے۔
حراست میں لینے کے بعدٹی ایم سی لیڈرڈیریک اوبرائن نے کہاکہ یہ ’سپرایمرجنسی ہے‘۔انہو ں نے کہاکہ ہمارے ممبران کی ٹیم کوسارے دستاویزوں کے باوجودجانے نہیں دیاگیا۔انہو ں نے کہاکہ ٹی ایم سی کے لیڈران قانون بنانے والے ہیں، توڑنے والے نہیں ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *