سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی کی حالت نازک

atal-bihari-vajpayee
سابق وزیراعظم اٹل بہاری واجپئی کی حالت بیحدنازک ہے۔آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنس(ایمس) نے میڈیکل بلیٹن جاری کرکے یہ جانکاری دی ہے۔ ایمس کی طرف سے جاری میڈیکل بلیٹن کے مطابق گذشتہ 24گھنٹے میں ان کی حالت اوربگڑی ہے۔سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی کی صحت زیادہ خراب ہونے کی وجہ سے انہیں لائف سپورٹ سسٹم پر رکھا گیا ہے۔ ایمس کے مطابق، گزشتہ 24 گھنٹوں میں ان کی حالت کافی خراب ہو چکی ہے۔ واجپئی 11 جون کو گردے، سینے میں جکڑن، پیشاب کی نلی میں انفیکشن ہونے کی وجہ سے ایمس میں بھرتی کرائے گئے تھے۔ ایمس کی جانب سے جاری ہیلتھ بولیٹن کے مطابق، ‘گزشتہ 24 گھنٹوں میں واجپئی کی حالت زیادہ خراب ہو گئی ہے، ابھی حالت نازک بنی ہوئی ہیاور وہ لائف سپورٹ سسٹم پر ہیں‘۔
اس سے پہلے پی ایم مودی ، مرکزی وزیراسمرتی ایرانی، پیوش گوئل اورمیناکشی لیکھی انہیں دیکھنے ایمس پہنچے۔یادرہے کہ اٹل بہاری واجپئی تقریباً دومہینے سے ایمس میں داخل ہیں۔ وہیں، دلی کے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال نے واجپئی کی صحت کو لے کر ٹویٹ کیا ہے۔ انہوں نے لکھا کہ اٹل جی کی صحت کے بارے میں جان کر دکھ ہوا۔ میں دعا کرتا ہوں کہ وہ جلد ٹھیک ہوں۔ قبل ازیں، نائب صدر جمہوریہ وینکیا نائیڈو بھی واجپئی کا حال جاننے کے لئے ایمس پہنچے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *