سابق لوک سبھا اسپیکر سومناتھ چٹرجی کا انتقال

somnath-chatterjee
سی پی ایم لیڈراورلوک سبھا کے سابق اسپیکر سومناتھ چٹرجی کا آج (پیر)صبح یہاں کے ایک پرائیویٹ اسپتال میں انتقال ہوگیا۔اسپتال کے سینئرعہدیدارنے بتایاکہ ان کے جسم کے کئی اعضاء نے کام کرنابندکردیاتھا۔سومناتھ چٹرجی 89سال کے تھے اوران کے کنبہ میں بیوی اوردوبیٹیاں ہیں۔اسپتال انتظامیہ کے مطابق، سومناتھ چٹرجی کودل کا ہلکادورہ پڑاتھا جس کے بعد ان کی حالت بگڑگئی اورآج صبح قریب 8:15بجے ان کا انتقال ہوگیا۔
خیال رہے کہ چٹرجی کو گزشتہ مہینہ برین ہیمریج ہوا تھا جس کے بعد سے ان کی صحت خراب چل رہی تھی۔ چند دنوں سے وہ گردے کے مسئلہ سے متاثر تھے اور اسی وجہ سے انہیں 10 اگست کو کلکتہ کے اسپتال میں دوبارہ داخل کرایا گیا تھا جہاں ڈاکٹروں نے انہیں وینٹیلیٹر پر رکھا تھا۔اتوار کی صبح ڈائلیسس کے دوران انہیں دل کا ہلکا دورہ بھی پڑا تھا ان کا آئی سی یومیں علاج چل رہاتھا۔
یادرہے کہ سابق اسپیکر سومناتھ چٹرجی 10 بار لوک سبھا کے رکن رہ چکے تھے۔ ان کے والد نرمل چندر چٹرجی اپنے زمانہ کے مشہور وکیل تھے۔ وہ اکھل بھارتیہ ہندو مہاسبھا کے بانی ارکان میں شامل تھے۔ حالانکہ سومناتھ چٹرجی نے اپنے والد کے موقف سے الگ ہٹ کر لیفٹ سیاست کی طرف قدم بڑھایا اور 1968 میں سی پی ایم کے ساتھ سیاسی کیریئر کی شروعات کی۔ 1971 میں وہ پہلی بار رکن پارلیمنٹ منتخب کئے گئے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *