گلکرائسٹ کی ادبی خدمات پر امریکہ کی محترمہ شارلٹ میڈرے کا خصوصی خطبہ

Charlotte-Madere
علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) کے شعبۂ لسانیات کے تحت واقع لینگویج آف ایڈورٹائزنگ میڈیا اینڈ مارکیٹ (ایل اے ایم ایم) میں یونیورسٹی آف منیسوٹا ، امریکہ کی محترمہ شارلٹ میڈرے کے خصوصی خطبہ کا اہتمام کیا گیاجس میں انھوں نے جان بورتھووِک گلکرائسٹ کی ادبی خدمات پر روشنی ڈالی۔ اپنے خطاب میں محترمہ شارلٹ میڈرے نے گلکرائسٹ کے ذریعہ برٹش ایسٹ انڈیا کمپنی کو پیش کی گئی رپورٹ پرگفتگو کرتے ہوئے فورٹ ولیم کالج میں ہندوستانی زبانوں کی درس و تدریس پر روشنی ڈالی ۔ انھوں نے کہاکہ گلکرائسٹ کے ادبی رویے سے اُس دور میں انگریزی زبان کی درس و تدریس میں بڑی مدد ملی اور اس سے ہندوستانی و برطانوی نوآبادیاتی وراثت کے تحفظ کا راستہ ہموار ہوا۔
اس موقع پر شعبۂ لسانیات کے صدر پروفیسر ایس امتیاز حسنین نے مہمان مقرر کا خیرمقدم کرتے ہوئے بنارس ہندو یونیورسٹی کے پروفیسر راجناتھ بھٹ کو پروگرام کی صدارت کے لئے مدعو کیا۔ ایل اے ایم ایم کے کوآرڈنیٹر ڈاکٹر ایم جے وارثی نے گلکرائسٹ کی خدمات کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ ان کے مطالعہ سے ہندوستانی زبانوں خاص کر ہندوستانی کی ابتدا اور نشوو نما کے سلسلہ کو سمجھنے میں آسانی ہوگی کیونکہ بعد کے دور میں یہی زبان شمالی ہند کی اصل زبان بنی۔ اس موقع پر شعبۂ لسانیات کے اساتذہ، ریسرچ اسکالرس کے علاوہ پروفیسر آفرینہ رضوی، ڈاکٹر مسعود اے بیگ، ڈاکٹر صباح الدین احمد سمیت دیگر معززین موجود تھے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *