جے ڈی یو رکن اسمبلی بیما بھارتی کے بیٹے کی مشتبہ حالت میں لاش برآمد

beema-bharti
بہارکی راجدھانی پٹنہ میں جنتادل یونائٹیڈ(جے ڈی یو) کی رکن اسمبلی بیمابھارتی کے بیٹے کی لاش ریلوے ٹریک پرمشتبہ حالت میں ملنے سے سنسنی پھیل گئی ہے۔رکن اسمبلی کے بیٹے کی لاش نالندہ میڈیکل کالج اسپتال کے سامنے ریلوے ٹریک سے برآمدہوئی ہے۔مقامی لوگوں نے پولس کوریلوے ٹریک پرلاش ہونے کی جانکاری دی تھی۔
پٹنہ پولس کوصبح کے وقت خبرملی کہ نالندہ میڈیکل کالج اسپتال کے سامنے ریلوے ٹریک پرایک نوجوان کی لاش پڑی ہے۔پولس موقع پرپہنچی اورلاش کواپنے قبضے میں لے لیا۔جب لاش کی شناخت کی گئی توپتہ چلاکہ لاش جے ڈی یو کے ایم ایل اے بیما بھارتی کے بیٹے دیپک کی ہے۔ لاش کو راجندر نگر ٹرمینل واقع سرکاری ریلوے پولیس (جی آر پی) تھانے لے جایا گیا۔

 

بہرکیف پولس نے فوراً معاملہ درج کرکے معاملے کی چھان بین شروع کردی ہے۔ حادثے کی جانکاری ملتے ہی بیمابھارتی کے کنبہ میں ماتم چھاگیا۔رکن اسمبلی بیمابھارتی کا الزام ہے کہ ان کے بیٹے کا قتل کیاگیاہے۔ جنتا دل یونائٹیڈ (جے ڈی یو) کی پورنیہ ضلع کے روپولی سے رکن اسمبلی بیمابھارتی کے بیٹے کی لاش پٹنہ سے مشتبہ حالت میں برآمد کی گئی۔ بتایاجارہاہے کہ بیمابھارتی کے شوہراودھیش منڈل پرکئی مجرمانہ مقدمے چل رہے ہیں۔ وہ کچھ ہی مہینے پہلے ہی ضمانت پرجیل سے باہرآئے ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *