بی جے پی رکن اسمبلی کا متنازعہ بیان،سرعام گؤکشی کرنے کی وجہ سے آیا کیرل میں سیلاب

basangoda
کرناٹک کی وجے پورا سیٹ سے بھارتیہ جنتا پارٹی(بی جے پی) کے ایم ایل اے باسنگوڑا پاٹل یتنال نے متنازعہ بیان دیاہے۔انہوں نے یہ متنازعہ بیان کیرالہ میں آئے سیلاب کو لے کر دیا ہے۔انہو ں نے کیرل میں آئے سیلاب کوگؤکشی سے جوڑتے ہوئے کہاکہ اس کی سزاوہاں کے لوگ بھگت رہے ہیں۔ باسنگوڑا پاٹل کا کہنا ہے کہ سر عام گؤکشی کرنے کی وجہ سے ریاست میں تباہ کن سیلاب آیا۔انہو ں نے کہاکہ جوکوئی ہندوؤں کے جذبات کوٹھیس پہنچائے گا ، وہ اسی طرح کے انجام سے گزرے گا۔
ایک تقریب میں انہوں نے کہاکہکیرل میں کھلے میں گؤکشی ہوتی ہے۔ کیا ہوا؟ ایک سال کے اندر ایسے حالات (سیلاب) آ گئے۔ جو بھی ہندو عقیدہ کو نقصان پہنچائے گا انہیں ایسے نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا۔باسنگوڑا نے کہا کہ گایوں سے ہندووں کے جذبات جڑے ہوئے تھے اور کسی کو دوسرے مذہب کے عقیدہ کو نقصان نہیں پہنچانا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ اگر بی جے پی کرناٹک میں اقتدار میں آتی ہے تو گؤکشی کو بند کر دیا جائے گا۔
خیال رہے کہ کہ باسنگوڑا پاٹل یتنال وہیں رکن اسمبلی ہیں، جوکچھ دن پہلے کارگل دیوس یہ کہہ کر سرخیوں میں آئے تھے کہ ’’اگر وہ وزیر داخلہ ہوتے تو وہ دانشوروں کو گولی مار دیتے کیوں کہ وہ اپنے ملک کا دفاع کرنے والے فوجیوں کے بجائے دہشت گردوں کے انسانی حقوق کے لئے کام کرتے ہیں۔‘‘
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *