میجرگوگوئی کورٹ آف انکوائری میں قصوروارقرار،کارروائی کاحکم

major-gogoi
کشمیرمیں تعینات سینا کے میجر تیتول گوگوئی کے خلاف ضابطہ کی کارروائی ہوگی۔میجرلیتول گوگوئی پر مقامی لوگوں سے دوستی اورگھولنے ملنے کا الزام ہے۔ دراصل، میجرلیتول گوگوئی سری نگرکے ایک ہوٹل میں کسی خاتون سے ملتے دیکھے گئے تھے۔ آپریشن ایریا میں ہوتے ہوئے بھی وہ ڈیوٹی کی جگہ سے دور تھے۔بہرکیف اس معاملے میں فوج کی کورٹ آف انکوائری میں قصور وار پائے جانے پر میجر لیتول گوگوئی کے خلاف ضابطہ کی کارروائی شروع کرنے کے احکامات دیئے گئے ہیں۔کورٹ آف انکوائری میں گوگوئی کو مہماتی علاقہ میں ڈیوٹی کے مقام سے دور رہنے اور احکامات کے خلاف مقامی لوگوں سے میل ملاپ بڑھانے کا ذمہ دار ٹھہرایا گیا ہے۔
پولس نے 23مئی کومعاملے سامنے آنے کے بعد گوگوئی کوحراست میں لیا تھا۔ وہ 18سالہ خاتون کے ساتھ سری نگرکے ایک ہوٹل میں مبینہ طورپر گھسنے کی کوشش کر رہے تھے اوراس دوران میجرکی ہوٹل اسٹاف سے کہاسنی بھی ہوگئی تھی ۔جس کے بعد پولس نے اسے حراست میں لے لیا تھا۔اس کے بعد فوج نے ان کے خلاف تفتیش کیلئے کورٹ آف انکوائری تشکیل دی تھی۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *