کیرل:بارش ، سیلاب اور لینڈ سلائڈ سے 26 کی موت 

keral
کیرل کے الگ الگ حصوں میں شدید بارش کے باعث آئے سیلاب اورمٹی کے تودے (لینڈسلائڈ)کھسکنے کے واقعات میں بدھ سے جمعرات کے بیچ قریب 26لوگوں کی موت ہوگئی ۔ڈیزاسٹر مینجمنٹ افسروں کے مطابق، سب سے زیادہ اڈوکی ضلع میں 11لوگوں کی موت ہوگئی ہے۔یہاں کے ادیمالی میں ایک کنبہ کے پانچ لوگوں کی موت ہوگئی۔ریاست کے 24باندھوں کوکھول دیاگیا۔اڈوکی باندھ بارش کی وجہ سے بھرگیاہے۔بتایاجارہاہے کہ 26سال کے بعد اس کا گیٹ کھولا گیا۔
ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے ذرائع کے مطابق اڈوکی میں مٹی کا تودہ گرنے سے 10 افراد ، ملپورم میں 5 ، کنور میں 2 اور وایناڈ ضلع میں ایک شخص کی موت ہوگئی ہے جبکہ وایناڈ ، پلکڑ اور کوزی کوڈ اضلاع میں ایک ایک شخص لاپتہ ہے۔ وہیں پانی سے نمٹنے کیلئے ریاستی سرکارنے فوج کی مددمانگی ہے۔
کوچی اےئرپورٹ ڈائریکٹر کا کہنا ہے کہ ہوائی اڈے کے کئی حصوں میں پانی بھرگیا،جس کی وجہ سے دوگھنٹے تک فلائٹ آپریشن پراثرپڑا۔علاوہ ازیں بھاری بارش کے پیش نظر کوچی ہوائی اڈہ پر طیاروں کی لینڈنگ دوگھنٹے کیلئے بند کردی گئی ہے۔
ادھرامریکہ نے ایڈوائزری جاری کر کے اپنے شہریوں سے کہا کہ وہ بارش اور سیلاب سے جوجھ رہے کیرل کے سفر پر جانے سے بچیں۔جنوبی مغربی مانسون کی وجہ سے ہندستان کی اس ریاست میں بھاری بارش ، سیلاب اور لینڈ سلائڈنگ کے واقعے پیش آرہے ہیں۔ ایسے میں امریکہ شہریوں کوکیرل تمام متاثر علاقوں کا سفر کرنے سے پرہیز کرنا چاہئے۔بہرکیف ریاست میں بدھ کی رات سے بھاری بارش کے سبب شمالی حصے میں کئی جگہ میں کئی لینڈ سلائڈ جس میں 26 لوگوں کی موت ہو گئی۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *