ہرمن پریت کور ایک نئی مصیبت میں 

Harmanpreet-Kaur
ہرمن پریت کور کسی تعارف کی محتاج نہیں ۔وہ ہندوستانی خواتین ٹی 20- کرکٹ ٹیم کی کپتان ہیں۔ انھوں نے اپنے کھیل سے سبھی کو چونکایا اور دل جیتا ۔ 2017 میں ورلڈ کپ کے سیمی فائنل میں انھوں نے اپنے کریئر کا سب سے بڑا اسکور171 رن بناتے ہوئے تاریخ رقم کی تھی۔ یہ اسکور ورلڈ کپ کی تاریخ میں کسی بھی ہندوستانی کھلاڑی کے ذریعہ بنایا گیا سب سے زیادہ ذاتی اسکور ہے۔ ان کی شاندار کارکردگی سے خوش ہوکر پنجاب سرکار نے انھیں پولیس میں ڈی ایس پی کے طور پر شامل کرلیا تھا۔ لیکن ہرمن پریت کور اب فرضی ڈگری کے معاملے میں پھنستی نظر آرہی ہیں۔ دراصل ملازمت دینے کے بعد جب پنجاب پولیس نے ان کی گریجویشن کی ڈگری ویریفکیشن کے لیے میرٹھ یونیورسٹی بھیجی تو وہاں اس ڈگری کا رجسٹریشن نمبر نہیں پایاگیا، جس سے اندازہ لگایا جارہا ہے کہ ان کی ڈگری فرضی ہے۔
عیاں رہے کہ ہرمن پریت کور موگا کی رہنے والی ہیں۔ انھیں ارجن ایوارڈ سے بھی سرفراز کیا جاچکا ہے۔ یکم مارچ کو انھیں ڈی ایس پی کے طور پر پنجاب پولیس میں شامل کیا گیا تھا۔ریاستی سرکار نے انھیںیہ ملازمت ورلڈ کپ میں ان کی شاندار کارکردگی کو دیکھتے ہوئے دی تھی۔ ہرمن پریت کور سے جب اس سلسلے میں پوچھا گیا تو انھوں نے کہا کہ انھیں اس بارے میں کوئی جانکاری نہیں ملی ہے۔ بہرحال پولیس نے اس معاملے سے جڑے سبھی حقائق آگے کی کارروائی کے لیے ریاستی سرکار کو ارسال کردیے ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *