آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس کے زیراہتمام مفت میڈیکل کیمپ 

free-unani-medical-camp
نئی دہلی:آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس کے زیراہتمام مفت یونانی میڈیکل کیمپ کا انعقاد ’عالمی یوم التہاب کبد‘ (World Hepatitis Day) کی مناسبت سے شہید اشفاق اللہ خاں پارک، نیوسیلم پور، دہلی میں کیا گیا، جس میں تقریباً پانچ سو مریضوں نے استفادہ کیا۔ افتتاحی تقریب میں آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس کے سابق کارگزار صدر اور دہلی اردو اکادمی کے سابق وائس چیئرمین پروفیسر (حکیم) الطاف احمد اعظمی نے کہا کہ تقریباً چار دہائیوں سے سنٹرل کونسل فار ریسرچ اِن یونانی میڈیسن (سی سی آریو ایم) میں جو تحقیقی نتائج سامنے آئے ہیں اسے بی یوایم ایس/ ایم ڈی یونانی کے نصاب میں شامل کیا جانا چاہیے نیز دواؤں کے پیٹنٹ پر بھی خاص توجہ دینے کی ضرورت ہے۔ کیونکہ جب تک تحقیقی نتائج کو عوام الناس کے لیے استعمال نہیں کیا جائے گااُس وقت تک ہمارے سارے دعوے محض کاغذی خانہ پُری کی حد تک محدود رہ جاتے ہیں۔
پروفیسر ایمریٹس دہلی یونیورسٹی ڈاکٹر عبدالحق نے کہا کہ غریب سماج کو اس طرح کے مفت کیمپ کی بہت ضرورت ہے۔ اگر ڈور ٹو ڈور جاکر غریب مریضوں کو طبی سہولت دی جائے تو مثالی کام ہوگا۔ کونسلر حجن شکیلہ افضال نے کہا کہ اس آسمان چھوتی مہنگائی کے مدنظر غریبوں کو مفت طبی سہولت فراہم کرنا بہت بڑی خدمت و عبادت ہے جس سے اللہ کی رضا و خوش نودی حاصل ہوتی ہے تو وہیں سماج میں بھی مقام بلند ہوتا ہے۔ انہوں نے آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس اور ڈاکٹر سیّد احمد خان کو مبارک باد پیش کی کہ انہوں نے طبی کیمپ کا انعقاد کرکے بڑا کام انجام دیا ہے اور امید ہے کہ یہ سلسلہ مسلسل جاری رہے گا جس کے لیے میں ہر ممکن اپنا تعاون دوں گی۔ بعد ازاں تجربہ کار ڈاکٹر محمد یونس نے کہا کہ ماء العسل کے استعمال کرنے کا نیا طریقہ شعبہ معالجات میں بڑا اضافہ ثابت ہوگا۔ انہوں نے بتایا کہ گزشتہ تین سال سے تقریباً ایک ہزار مریضوں پر ماء العسل کے استعمال کا نیا تجربہ کیا جو الحمدللہ بہت کامیاب رہا اور ہنوز اس پر ابھی مزید تحقیقی پروگرام جاری ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ حجامہ کے بعد شعبہ معالجات میں ماء العسل کے استعمال کا فائدہ نہ صرف مریضوں کو بلکہ اطلبا کو بھی ملے گا۔
اس موقع پر حکیم عطاء الرحمن اجملی کے ہمراہ ڈاکٹر سلیم ملک، محمد ارشد غیاث (میوات)، حاجی محمد افضال، ڈاکٹر مشکوراللہ شیروانی، محمد صادق شیروانی، ڈاکٹر محمد عمر، حکیم محمد مرتضیٰ قاسمی، حکیم نورالدین، حکیم حافظ مرتضیٰ دہلوی، حکیم اعجاز احمد اعجازی دربھنگوی، وفا اعظمی، قاری محمد مخدوم حسینی، سائرہ خاتون، ریاض احمد شمسی، محمد اویس گورکھپوری، حکیم محمد ایوب، محمد ارشد، محمد سعد، محمد حبیب، عرشی ناز، ماسٹر محمد زاہد اور امیر حسن وغیرہ نے اپنی اعجازی خدمات پیش کیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *