جیل میں نواز شریف کی حالت بگڑی، گردے فیل ہونے کا خدشہ

nawaz-sharif

اسلام آباد:پاکستان کے سابق وزیراعظم نوازشریف کی میڈیکل رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ جسم میں پانی کی کمی کے باعث گردے فیل ہونے کا خدشہ ہے، گرمی اور کم نیند نے بھی صحت کو متاثر کیا ہے۔ ایک میڈیکل بورڈ نے سفارش کی ہے کہ نواز کو اڈیالہ جیل سے اسپتال میں داخل کیا جائے۔ ایکسپریس ٹریبیون کی خبر کے مطابق شریف کے پیشاب میں نائٹروجن خطرناک سطح تک بڑھ گیا ہے۔ ڈاکٹروں نے سابق وزیر اعظم کو راولپنڈی انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی منتقل کرنے کی تجویز دے دی۔اس کی اطلاع میڈیا رپورٹ سے ملی۔ پاکستان کے معروف اخبار جنگ کی رپورٹ کے مطابق اڈیالہ جیل میں رات گئے نواز شریف کے کیے گئے طبی معائنے کی رپورٹ سامنے آگئی، رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ صورتحال میں بہتری نہ آئی تو نواز شریف کے دل کا مرض بھی بڑھ سکتاہے۔رپورٹ کے مطابق نیند کی کمی اورزیادہ پسینے کی وجہ سے نواز شریف کے جسم میں پانی کی کمی ہے۔ڈاکٹراظہرکیانی اورڈاکٹرحامد شریف خان نے نوازشریف کا معائنہ کیا اور اپنی رپورٹ میں تجویز کیاکہ صورتحال کے پیش نظرنوازشریف کو راولپنڈی انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی منتقل کیا جائے۔

 

پاکستان کی میڈیا خبروں کے مطابق جیل کے حالات کے سبب نواز کو بہت زیادہ پسینہ آرہا ہے۔ اسپتال میں بیمار شریف کو فور فلوئڈ دینے کی سہولت نہیں ہے۔ ایکسپریس نیوز کی خبر کے مطابق نواز کو اسپتال لے جانا ضروری ہے اور اگر ایسا نہیں کیا جاتا ہے تو ہنگامی صورتحال پیدا ہو سکتی ہے۔قابل غور ہے کہ شریف اور ان کی بیٹی مریم نواز کو 13 جولائی کے روز گرفتار کیا گیا تھا۔ بدعنوانی کے معاملہ میں شریف کو 10 اور مریم کو 7 سال کی جیل ہوئی ہے۔

 

 

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *