اویسی کا نتیش کمارپرحملہ،کہا!ہمیں ’ووٹ کٹوا‘ پارٹی بتاکرخودپی ایم مودی کی گود میں بیٹھ گئے

owaisi
آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین (اے آئی ایم آئی ایم) کے قومی صدر اور حیدر آباد سے رکن پارلیمنٹ اسد الدین اویسی نے بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار پر حملہ بولا۔اسدالدین اویسی نے نتیش کمارپرحملہ بولتے ہوئے کہا کہ انہو ں نے گذشتہ اسمبلی لیکشن میں بی جے پی کوروکنے کے نام پرووٹ لینے کے بعد اسی کے ساتھ سرکاربناکرریاست کے عوام کے دھوکہ کیاہے۔دراصل، 2019لوک سبھاالیکشن کی تیاری کولیکرکشن ضلع کے ٹھاکرگنج پہنچے اویسی نے ایک اجلاس کوخطاب کرتے ہوئیکہاکہ 2015کے بہاراسمبلی الیکشن کے دوران آل انڈ یامجلس اتحادالمسلمین (اے آئی ایم آئی ایم ) کونتیش کمار نے ’ووٹ کٹوا‘ پارٹی بتایاتھا اورآج ان کی پارٹی خودپی ایم مودی کی گود میں بیٹھ گئی ہے۔اویسی نے صحافیوں سے کہا کہ عظیم اتحاد میں شامل جے ڈی یونے بی جے پی کوروکنے کیلئے لوگوں سے ووٹ لیاتھا لیکن اب لوگوں کودھوکہ دیکربی جے پی سے مل کرسرکاربنالی۔
شرعیہ کورٹ کولیکراٹھائے جارہے سوالوں پر اویسی نے کہا کہ 25 سال سے ملک کی کئی ریاستوں میں شریعت کورٹ موجودہیں،جہاں قاضی مقرر ہیں وہاں کے لوگوں کو شریعہ سے انصاف ملتا ہے۔اگر دونوں پارٹی میں سے کسی کو فیصلے پر اعتراض ہے تو ان کے لئے عدالت کے دروازے کھلی ہوئی ہے اور وہ وہاں انصاف کیلئے جا سکتے ہیں۔
اویسی نے اعلان کیا کہ اے آئی ایم آئی ایم کشن گنج سے لوک سبھا انتخابات لڑے گی اور پارٹی کے امیدوار اخترالایمان ہوں گے۔انہوں نے کانگریس اور اس کی ساتھی پارٹیوں کو بھی نشانے پر لیتے ہوئے کہا کہ آزادی کے بعد سے اس سیمانچل علاقے نظر انداز کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ یہاں کے لوگوں سے ووٹ لیکر ہمیشہ ٹھگا گیا ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *