افغانستان سے 14 ؍ ڈاکٹروں کے ایک گروپ کی آمدپرجودھپورمیں تعارفی تقریب 

Afgani-Students

جودھپور: مولانا آزاد یونیورسٹی جودھپور کے پبلک ہیلتھ مینجمنٹ میں پوسٹ گریجویٹ کورس میں شرکت کے لیے افغانستان سے 14 ؍ ڈاکٹروں کا ایک گروپ جودھپور پہنچا۔ آج ان کے داخلے کی رسمی کاروائیوں کی تکمیل کے بعد یونیورسٹی نے ان کے لیے ایک تعارفی اوراستقبالیہ تقریرکا اہتمام کیا جس میں ماروڑ مسلم ایجوکیشنل اینڈ ویلفئر سوسائٹی کے جنرل سیکریٹری جناب محمد عتیق نے افغانی مہمانون کا استقبال کرتے ہوئے کہا کہ وہ اتنی دور سے آئے ہیں اور صرف صحتِ عامہ میں مہارت حاصل کرنے کے لیے یہ بڑا قابلِ قدر جذبہ ہے ۔

 

 

مولانا آزاد یونیورسٹی کے پریسیڈینٹ پدم شری پروفیسر اخترالواسع نے کہا کہ تعلیم کے میدان میں افغانستان اور ہندوستان کے رشتے بہت پرانے ہیں۔ افغانی سربراہ شاہ حبیب اللہ نے علامہ اقبال اور سید سلیمان ندوی جیسے اہلِ علم کوافغانستان میں علم کا نیا نظام اور نصاب بنانے کے لیے مدعو کیا ۔یہ بھی کم اہم بات نہیں ہے کہ افغانستان جن صبر آزما حالات سے گزر رہاہے اس میں بھی وہاں کے لوگ اور حکومت تعلیم کے حصول سے غافل نہیں۔
افغان مہمان طالبِ علم ڈاکٹر بشری نے ا پنے ملک اور ساتھیوں کی طرف سے مولانا آزادیونیورسٹی اور ذمہ داران کا شکریہ ادا کیا اور کہا ہمارامقصد اپنی اور اپنے خاندان کی معاشی کفالت و فراغت نہیں بلکہ عام انسانوں کی خدمت ہے۔اس تقریب میں حاجی عباداللہ قریشی ، حاجی محمد اسحاق ، حنیف لوہانی ، عبدالرّوف انصاری ، وسیم اعظمی ، صدیق علی ،ڈاکٹر بھاؤنا شریک تھیں۔اس تقریب کی نظامت محمد امین نے کی۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *