راہل گاندھی کی افطارپارٹی:پرنب مکھرجی، پرتبھا پاٹل اور حامد انصاری سمیت سرکردہ لیڈروں کی شرکت

Rahul-ftar

کانگریس صدربننے کے بعدراہل گاندھی نے پہلی بارافطارپارٹی کا انعقادکیا۔کانگریس کے صدر راہل گاندھی کی جانب سے رمضان المبارک کے آخری عشرہ کے دوران بدھ(13جون) کو دہلی میں افطار پارٹی کا انعقادشاندارطریقے سے تاج پلیس ہوٹل میں کیا گیا۔کانگریس کی اس افطارپارٹی میں مذہبی اورسیاسی سرکردہ شخصیات کے ساتھ ہی اپوزیشن کے لیڈروں نے بھی شرکت کی۔اس افطارپارٹی میں کانگریس 18سیاسی پارٹیوں کودعوت نامہ بھیجا۔خبروں کے مطابق ،صرف 10سیاسی پارٹیو ں کے لیڈروں نے ہی شرکت کی۔راہل گاندھی کی طرف سے منعقدہ اس افطار پارٹی میں پارٹی کے کئی سینئرلیڈران شامل ہوئے۔اس میں سابق صدور پرنب مکھرجی ، پرتبھا پاٹل ، سابق نائب صدر جمہوریہ حامد انصاری کے علاوہ سی پی ایم لیڈرسیتارام یچوری سمیت لیفٹ کے کئی لیڈران شامل ہوئے۔پارٹی میں کانگریس سے غلام نبی آزاد، احمدپٹیل، راجیوشکلا، شیلادکشت پہنچے۔وہیں جے ڈی یوکے سابق لیڈرشردیادو، ٹی ایم سی کے دنیش ترویدی ، این سی پی کے ڈی پی ترپاٹھی ، آرجے ڈی کے منوج جھا، بی ایس پی کے ستیش چندرمشرا،ڈی ایم کے کے کنی موزی، اے آئی یوڈی ایف کے مولانابدرالدین اجمل، جے ایم کے کے ہیمنت سورین، آرایل ڈی کے معرا ج الدین، جے ڈی ایس دانش علی موجودرہے ۔اس کے علاوہ سابق وزیر پی چدمبرم، اے کے انٹونی، پرتھوی راج چوہان، ششی تھرر اور آنند شرما، موتی لال ووہرااور جناردن دویدی وغیرہ کئی سینئر کانگریسی لیڈر افطار پارٹی میں شامل ہوئے۔ ہندوستان میں روس کے سفیر نکولئے آر کداشیو کے علاوہ کئی دیگر ممالک کے سفارت کار بھی اس موقع پر موجود تھے۔ان معززہستیوں کے علاوہ کثیر تعداد میں سیاست داں و دیگر شعبہ ہائے زندگی سے وابستہ افراد کی شرکت کی۔

 

راہل گاندھی کی اس افطارپارٹی میں ترنمول کانگریس کی صدروزیراعلیٰ ممتابنرجی اورآرجے ڈی کے تیجسوی یادواوراین سی پی کے شرد پوارنہیں پہنچ پائے ہیں،وہیں راہل گاندھی نے اس شاندارافطارپارٹی میں دہلی کے وزیراعلیٰ اورعام آدمی پارٹی کے کنوینراروندکجریوا کونہیں بلایا۔
عیاں رہے کہ پرنب مکھرجی کے گزشتہ دنوں آر ایس ایس کی تقریب میں جانے پر انہیں افطار پارٹی میں نہ بلائے جانے کی خبریں آئی تھی، جس کی بعد میں کانگریس نے تردید کی تھی۔ مسٹر مکھرجی آج افطار میں شامل ہوئے اور وہ مسٹر گاندھی کے ساتھ بیٹھے ہوئے تھے۔ دونوں رہنما بات چیت کرتے بھی نظر آئے۔آپ کوبتادیں کہ کانگریس کی سابق صدر سونیاگاندھی علاج کیلئے بیرون ملک ہونے کی وجہ سے افطارپارٹی میں شامل نہیں ہوسکیں۔بہرکیف اس افطار پارٹی کا انعقاد دہلی کے تاج پیلس ہوٹل میں کیا گیا۔ خیال رہے کہ راہل گاندھی کے کانگریس صدر بننے کے بعد پارٹی کی طرف سے پہلی مرتبہ افطار پارٹی کا انعقاد کیا گیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *