ہجومی تشدد کی روک تھام کرنا حکومت کی اہم ذمہ داری : مفتی مکرم

mufti-mukarram-ahmed
نئی دہلی: شاہی امام مسجد فتحپوری دہلی مولانا ڈاکٹر مفتی محمد مکرم احمد نے آج نماز جمعہ سے قبل خطاب میں مسلمانوں سے اپیل کی کہ ماہ رمضان المبارک گذرنے کے بعد عبادتوں میں غفلت نہ کریں۔ نماز جماعت کے ساتھ ادا کریں۔ جمعہ کی نمازوں میں اتحاد کے ساتھ کثیر تعداد میں حاضر ہوں ،صدقہ خیرات ،غریبوں اور بیماروں وغیرہ کی مدد کرنے میں ہر وقت تیار رہیں ۔بندوں کی مدد کرنے سے اﷲتعالیٰ کی مدد ہمارے ساتھ شامل حاصل ہوتی ہے ۔اسی کے ساتھ عید الفطر پر امن ماحول میں ادا ہوئی اس پر انہوں نے اطمینان کا اظہار کیا۔
اس موقع پر شاہی امام صاحب نے اترپردیش کے ہاپوڑ کے پلکھوا گاوٗں بجھیڑ میں قاسم اور سمیع کے ساتھ بے رحمانہ مارپیٹ کرنے اور ہجومی تشدد میں قاسم کی ہلاکت اور سمیع کے زخمی ہونے کی مذمت کی اور شدید رنج و غم کا اظہار کیا۔انہوں نے متاء ثرین کو معاوضہ دئے جانے کی اپیل کی ۔نیز ملزمان کے خلاف فوری کاروائی کا مطالبہ کیا ۔انہوں نے بریلی بارہ دری علاقہ ثقلین نگر کے کانکرٹولہ چوکی کے پولیس اہلکاروں کے خلاف کاروائی کا مطالبہ کیا جن کے تشدد سے محمد سلیم نامی گوشت تاجر کی موت واقع ہوئی ۔
شاہی امام نے اسرائیلی حکومت کے ذریعہ غزہ میں اور فلسطینی مقبوضہ علاقوں میں نہتے فلسطینی عوام عورتوں،بچوں اور بیماروں کی ہلاکت پر شدید غم کا اظہار کیا اور یو این سیکریٹری جنرل کی ستائش کی کہ وہ اسرائیل کے بارہ میں رپورٹ عام کر رہے ہیں۔شاہی امام نے مطالبہ کیا کہ یو این سیکریٹری کونسل کو حقوق انسانی کے تحفظ میں اقدام کرنے چاہےءں اور اسرائیل کے خلاف سخت سے سخت کاروائی کرنی چاہئے۔انہوں نے ملک شام میں امریکی فضائی حملوں کی بھی شدید مذمت کی اور امریکہ سے مطالبہ کیا کہ اپنی طاقت کا وہ بے جا اور غلط استعمال نہ کرے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *