پانچ گھنٹے میں کرائم برانچ نے باباداتی مہاراج سے پوچھے 100سوال 

daati-maharaj
گذشتہ چنددنوں پہلے راجستھان کی ایک 25 سالہ لڑکی نے خود ساختہ باباداتی مہاراج اور اس کے شاگردوں پر اس کے ساتھ بار بار عصمت دری کرنے کا الزام لگایا اورساتھ ہی ان کے خلاف پولس میں شکایت کی۔بہرکیف ریپ کیس درج ہونے کے بعد انڈرگراؤن چل رہے باباداتی مہاراج منگل کودوپہر چانکیہ پوری میں واقع کرائم برانچ پہنچ گئے۔ کرائم برانچ کے سینئرافسروں نے ان سے 5گھنٹے تک پوچھتاچھ کی۔ پولس ذرائع کا کہناہے کہ اس دوران پولس افسروں نے ان سے 100سے زائدسوال پوچھے، لیکن انہو ں نے کسی بھی سوال کا سیدھا جواب نہیں دیا۔رات 8بجے پولس افسروں نے انہیں چھوڑتے ہوئے جمعہ کودوبارہ پوچھتاچھ کیلئے بلایاہے۔
خیال رہے کہ راجستھان کی 25سالہ لڑکی نے خودساختہ بابا داتی مہاراج اوراس کے شاگردوں پرعصمت دری کا الزام لگایاتھا۔یہ معاملہ جنوبی دہلی کے فتح پور بیری تھانہ میں درج کرایاگیاتھا۔ لڑکی نے پولس کوبتایاکہ وہ قریب ایک دہائی سے مہاراج کی پیروکارتھی، لیکن مہاراج اورشاگردوں کے ذریعہ بار بار ریپ کئے جانے کے بعد وہ اپنے گھرراجستھان لوٹ گئی تھی۔ جنوبی دہلی کے فتح پور بیری تھانے میں لڑکی نے کل داتی مہاراج کے خلاف شکایت دی ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *