انڈونیشیامیں کشتی ڈوبنے سے 178 مسافر لاپتہ

kashti
انڈونیشیاکی طوبیٰ جھیل میں گذشتہ روزشام ایک مسافرکشتی ڈوب جانے سے سوسے زائدافرادلاپتہ ہوگئے ہیں۔خبروں کے مطابق، انڈونیشیا کے جزیرے سماٹرا کی جھیل طْوبی میں سوموار کے دن ڈوبنے والی مسافر کشتی کے 178 مسافر لاپتہ ہیں۔پولیس ڈائریکٹریٹ کے ترجمان یْسری یونس نے کہا ہے کہ کشتی، طوبی جھیل میں ساموسیر سے سیمالْنگْن کی طرف جارہی تھی کہ راستے میں الٹ گئی۔ مسافروں کے کنبوں سے حاصل کردہ معلومات کے مطابق حادثے میں لاپتہ ہونے والے مسافروں کی تعداد 178 تک ہے۔وزارت رسل و رسائل نے بھی وسیع پیمانے پر تلاش و بچاؤ کی کاروائیوں کے لئے 5 اسپیشل ٹیموں کی تشکیل کا اعلان کیا ہے۔قومی آفات انتظامی ایجنسی کے ترجمان ‘سٹوپو پوروو نگروہو ‘نے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ تلاش و بچاو کے کاموں کے دوران 19 افراد کو بچا لیا گیا ہے جبکہ ایک شخص کی لاش نکالی گئی ہے۔انہوں نے کہا ہے کہ کشتی کے مسافروں کی فہرست موجود نہ ہونے کی وجہ سے لاپتہ مسافروں کی تعداد کے اور بھی زیادہ ہونے کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔حکام شبہ ظاہر کر رہے ہیں کہ حادثہ نامساعد موسمی حالات کی وجہ سے اور کشتی کی صلاحیت سے زیادہ مسافروں کی وجہ سے پیش آیا ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *