پرنب مکھرجی کو افطار پارٹی میں مدعوکرنے پر اسد الدین اویسی کی تنقید

owaisi
بدھ کوشام کانگریس صدرراہل گاندھی نے دہلی کے تاج ہوٹل میں افطارپارٹی کا انعقاد کیاتھا۔وہیں اس افطارپارٹی کے بعد ہی آل انڈیامجلس اتحادالمسلمین (اے آئی ایم آئی ایم)کے قومی صدر اوررکن پارلیمنٹ کا ایک بیان آیاہے۔دراصل، اسد الدین اویسی نے سابق صدر جمہوریہ پرنب مکھرجی کو افطار پارٹی میں مدعو کئے جانے پرکانگریس صدر راہل گاندھی کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اسے سب سے بڑا نفاق قرار دیا۔مسٹر گاندھی کی میزبانی میں بدھ کو منعقد افطار پارٹی میں شامل ہونے والی ممتاز شخصیات میں سابق صدر جمہوریہ مسٹر مکھرجی، پرتیبھا پاٹل، سابق نائب صدر حامد انصاری اور سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ بھی شامل تھے۔
مسٹر اویسی نے ٹوئٹ کیا’’آر ایس ایس دفتر میں تقریرکی، آر ایس ایس کے بانی کی مدح سرائی کی اور اس کے بعد انتہائی اطمینان سے افطار پارٹی میں شامل ہوئے۔یہ سب سے بڑا پاکھنڈ ہے‘‘۔ مسٹر مکھرجی آر ایس ایس کی دعوت قبول کرنے اور ناگپور میں واقع آر ایس ایس دفتر میں منعقد پروگرام سے خطاب کرنے کے بعد تنازعات کے گھیرے میں آ گئے ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *