جامع مسجد کی زمین پر قبضہ کرنے کوشش، ایس ڈی ایم کو میمورنڈم

Masjid
دیوبند:گاؤں راجوپور کی جامع مسجد کے خالی پڑے پلاٹ پر ناجائز طریقہ سے قبضہ کرنے کولیکر گاؤں کے لوگوں میں سخت غم وغصہ ہے،آج اس سلسلہ میں مسجد کے متولی سمیت گاؤں کے دیگر لوگوں نے ایس ڈی ایم کو میمورنڈم دے کر مسجد کے پلاٹ پر قبضہ کرنے کی کوشش کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی مانگ کی ہے۔ آج راجوپور کے درجنوں باشندوں نے ایس ڈی ایم دیوبند رام ولاس یادو کو سونپے گئے میمورنڈم میں بتایاکہ راجوپور کی جامع مسجد کے باہر مسجد کی ملکیت کے طورپر ایک پلاٹ پڑاہے، جس میں گاؤں کے لوگ جنازہ کی نماز پڑھتے ہیں مگر اس پلاٹ پر گاؤں میں مدرسہ چلارہا سفیان نامی شخص ناجائز طریقہ سے قبضہ کرنے کی نیت سے دروازے اورکھڑکی وغیرہ کھولنے کی کوشش کررہاہے جب گاؤں والوں نے پنچایت کرکے اس پر اعتراض کیا تو اس نے کام بند کرنے کی بات کہی مگر کام ابھی تک بند نہیں کیا گیا،اتنا ہی نہیں بلکہ انہوں نے پلاٹ میں قبضہ کی نیت سے وہاں اینٹ،روڈہ وغیرہ بھی ڈالوادیا اور مسجد کی لکھوری اینٹ کی دیواروں میں مدرسہ کی جانب سے الماریاں بھی کھول لی ہیں،جس سے مسجد کی بنیادبہت کمزور ہوگئی ہے۔
میمورنڈم میں مطالبہ کیاگیاہے کہ گاؤں میں امن وامان برقرار رکھنے کے لئے مذکورہ کام کو موقع پر پولیس بھیج کر رکوایا جائے، اگر یہ کام نہ رکوایاگیا تو کبھی بھی گاؤں میں کوئی واقعہ پیش آسکتاہے۔بعد ازیں ان لوگوں نے محلہ خانقاہ میں واقع ایک مکان میں دیوبند میڈیا کے سامنے بھی مسجد کی زمین کے سلسلہ میں پورے معاملات کی تفصیلات رکھی۔ اس دوران محمد ناصر،احسان، نجم احمد،عاقل، مسرور،سہیل،حامد،محمد رئیس،شمیم، منور،مستقیم، راجو،شاہ ویز، شہزاد،غلام رسول وغیرہ سمیت درجنوں لوگ موجودرہے۔

 

یہ بھی پڑھیں    جامعہ امام محمد انور شاہ میں ختم بخاری شریف تقریب
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *