شادی کی خوشی ماتم میں تبدیل

accident-in-ghaziabad
غازی آباد:قومی راجدھانی دہلی سے متصل غازی آبادمیں جمعہ کی دیرشب شادی کی خوشی اس وقت ماتم میں بدل گئی جب ایک حادثہ میں 7لوگوں کی موت ہوگئی۔یہ حادثہ قومی شاہراہ نمبر24وجے نگرکے پاس ہوا۔خبروں کے مطابق، جمعہ کی دیرشب ایک ٹاٹا سومو قریب 20فٹ گہرے نالے میں جاگری۔اس حادثے میں دولہے کے والد سمیت سات افرادکی موت ہوگئی۔وہیں دیگرزخمی اسپتال میں زیرعلاج ہیں،زخمیوں کی حالت نازک بتائی جارہی ہے۔ بتایاجارہاہے کہ یہ حادثہ کارمیں سوارایک بچے کے ہنڈ بریک کھولنے کی وجہ سے ہوا۔
واقعہ کی جانکاری دیتے ہوئے سی اومنیشاسنگھ نے بتایاکہ جمعہ کی دیرشب بودھ وہار بہرام پور کی گلی نمبر 4کے رہائشی اوم پرکاش کے بیٹے روی کی شادی کی بارات کھوڑا آئی تھی۔ دولہے کے والد سمیت دیگر12افرادٹاٹا سومو سے جارہے تھے ۔گاڑی ڈرائیورنے کسی کام سے گاڑی این ایچ 24کے کنارے وجے نگرکے پاس روک دی۔ڈرائیورنے گاڑی کا ہینڈ بریک لگادیاتھا۔دوسری جانب ڈرائیورکے برابرمیں بیٹھے ایک بچے نے ہینڈ بریک کھول دیا۔جس کے باعث کاربے قابوہوگئی اورنالے میں جاگری۔کسی کوسنبھلنے تک کاموقع نہیں ملا۔اس حادثہ میں دولہے کے والد اوم پرکاش، مدھو، ریما، ریتو، انشکا اور6سالہ بچی کی موت ہوگئی۔حادثے میں ہلاک ہوئے لوگ بنیادی طورپراتراکھنڈ کے رودور پور اوربریلی دھورا کے باشندہ ہیں۔
عیاں رہے کہ حادثہ جہاں ہواہے وہ دولہے کے گھرسے 400میٹردوری پرتھا۔وہیں متاثرہ خاندان نے حادثہ کا ذمہ دارگاڑی نمبرUP17T/7408کے ڈرائیور کوماناہے۔ خاندان نے ڈرائیورکے خلاف رپورٹ درج کرادی ہے۔دعویٰ کیا جارہاہے کہ ڈرائیورجب کاراسٹارٹ کررہاتھا تبھی کار بیک ہوگئی اورنالے میں گرگئی۔ڈرائیورموقع سے فراربتایاجارہاہے۔

 

یہ بھی پڑھیں  انسانیت اوررشتہ پھرشرمسار
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *