سپریم کورٹ سے سلمان خان کو بڑی راحت

salman-khan
فلم اسٹار سلمان خان کو بڑی راحت ملی ہے۔ سپریم کورٹ نے ایس سی ایس ٹی ایکٹ کے تحت ان کے خلاف ملک بھر میں داخل معاملوں کی جانچ پر روک لگادی ہے۔ سپریم کورٹ نے سلمان خان کی عرضی پر سماعت کرتے ہوئے سبھی فریقوں کو نوٹس جاری کیا ہے۔ معاملے کی اگلی سماعت23جولائی کو ہوگی۔فلم اسٹار سلمان خان سمیت کئی فنکاروں کے خلاف فلم ٹائیگر زندہ ہے کی تشہیر کے دوران والمیکی سماج کے لئے ذات کی بنیاد پر ہتک آمیز الفاظ کہے جانے کے خلاف کئی ریاستوں میں ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔ ان سبھی ایف آئی آر کو منسوخ کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے سپریم کورٹ میں عرضی داخل کی گئی ہے۔

 

یہ بھی پڑھیں   فلم انڈسٹری میں ریپ کے بدلے روٹی ملتی ہے، سروج خان کا متنازع بیان

 

گزشتہ 7مارچ کو دہلی کی پٹیالہ ہاؤس کورٹ نے ان فنکاروں کے خلاف ذات پر مبنی لفظ استعمال کرنے پر ایف آئی آر درج کرنے کا مطالبہ کرنے والی عرضی خارج کردی تھی۔ سلمان اور دیگر فنکاروں کے خلاف راجستھان میں بھی ایف آئی آر درج کیا گیا ہے۔ ایسا ہی ایک معاملہ ممبئی پولس کے سامنے بھی آیا تھا لیکن ممبئی پولس نے ایف آئی آر درج نہیں کیا کیونکہ راجستھان میں اسی معاملے میں ایف آئی آر درج ہوچکا تھا۔ایف آئی آر میں کہا گیا ہے کہ فلم کی تشہیر کے دوران سلمان نے اپنے ایک ڈانس اسٹیپ کے بارے میں بتاتے ہوئے بھنگی لفظ کا استعمال کیا۔ وہیں شلپا نے اسی الفاظ کا استعمال کرتے ہوئے ریئلٹی شو میں کہا تھا کہ گھر میں اکثر ایسی ہی دکھتی ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *