’آئین بچاؤ ‘ مہم میں مودی حکومت پربرسے راہل گاندھی

rahul-gandhi
دہلی کے تالکٹورا اسٹیڈیم میں آج منعقد ’آئین بچاؤ‘ تقریب کوخطاب کرتے ہوئے کانگریس صدرراہل گاندھی نے مودی سرکار، بی جے پی اورآرایس ایس پرجم کربرسے۔ راہل گاندھی نے آئین بچاؤ مہم کی شروعات کے دوران کہاکہ ’ہم بی جے پی اورآر ایس ایس کوآئین سے چھیڑچھاڑ کرنے، اسے بربادکرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔ ہم بی جے پی کوآئین چھونے تک نہیں دیں گے۔دراصل کانگریس کے صدر راہل گاندھی 2019 کے لوک سبھا انتخابات اور اس سال کئی ریاستوں میں ہونے والے اسمبلی انتخابات کو لے کر مودی حکومت کے خلاف ماحول تیار کرنے مصروف ہیں۔ آج راہل گاندھی نے دہلی کے تالکٹورا اسٹیڈیم میں مودی حکومت کے خلاف ’آئین بچاو‘ مہم شروع کی۔ اس دوران راہل گاندھی نے بی جے پی حکومت اور پی ایم مودی کوآڑے ہاتھوں لیا۔انہو ں نے کہاکہ اب ہرکوئی جان گیاہے کہ پی ایم مودی کے دل میں دلتوں، خواتین اورکمزوروں کیلئے کوئی جگہ نہیں ہے۔راہل نے کہاکہ کانگریس پارٹی اورامبیڈکر نے آئین کولکھا اورملک کودیاہے ، جوبھی آئینی باڈی ہیں، چاہے لوک سبھا ہو، راجیہ سبھا اورآئی آئی ٹی ہو، سب ہمارے آئین نے دیاہے۔ آئین کے بغیر نہ لوک سبھا، نہ راجیہ سبھا بنتے اورنہی آئی آئی ٹی اورنہ ہی بنگلوروبنتا۔ آئین ہے توملک ہے۔
راہل گاندھی نے الزام لگایا کہ وزیر اعظم مودی نے دنیا بھر میں ہندوستان کے وقار کو ختم کر دیا۔ کانگریس نے پچھلے 70 سال میں یہ وقار بنایا تھا۔ راہل گاندھی نے کہا کہ اگلے سال ہونے والے عام انتخابات میں ملک کے عوام وزیر اعظم مودی کو اپنے من کی بات بتائیں گے۔کانگریس صدر نے کہا کہ ہماری پارٹی نے ملک کو 70 سال دئیے۔ ہم نے ادارے بنائے۔ ہم اسے ایسے ہی برباد ہونے نہیں دیں گے۔ اگلے سال ہونے والے لوک سبھا انتخابات میں ہم جواب مانگیں گے۔ راہل گاندھی نے کہا کہ وزیر اعظم مودی نے بی جے پی ارکان پارلیمنٹ اور ارکان اسمبلی کو بولنے سے منع کر دیا ہے۔ پورا ملک صرف ان کی بات سنے گا۔ وہ بھی صرف اپنے من کی بات۔راہل گاندھی نے کہا کہ پی ایم مودی کو دنیا میں صرف ایک شخص میں دلچسپی ہے اور وہ شخص خود وزیر اعظم مودی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ میں وزیراعظم مودی میرے سامنے بولنے سے ڈرتے ہیں۔
راہل گاندھی نے مودی حکومت پرحملہ بولتے ہوئے کہاکہ ہمارے ادارے میں آرایس ایس کے نظریات والے لوگوں کوڈالا جارہاہے ۔پہلی بار ہندوستان کی تاریخ میں ہواہے کہ چار جج عوام کے پاس جاکر انصاف مانگ رہے ہیں۔ہمیشہ عوام جج کے پاس جاتے ہیں، مگریہاں برعکس ہورہاہے۔ پارلیمنٹ کوبندکررکھاہے۔ پی ایم مودی پارلیمنٹ میں کھڑ ے ہونے سے گھبراتے ہیں۔ انہو ں نے کہاکہ نیرومودی ، للت مودی اورمالیہ کا معاملہ ہے۔ میری 15منٹ مودی جی کے سامنے تقریرکرادو، میں نیرومودی ، مالیہ ، رافیل کی بات کروں گا، مودی جی وہاں کھڑا نہیں ہوپائیں گے۔ پورادیش جانتاہے کہ رافیل میں گھوٹالہ ہوا۔ نیرومودی اتناپیشہ لیکربھاگ جاتاہے، مگران کے دوست کچھ نہیں بول رہے ہیں۔پریس کودبایاجاتاہے۔
راہل گاندھی نے کہاکہ پہلے بیٹی بچاؤ، بیٹی پڑھاؤ کا نعرہ تھا ، مگراب صرف بیٹی بچاؤ ہے۔ اب بیٹی بچاؤ صرف بی جے پی کے لیڈروں سے بچاؤ۔بیٹی کے والدین ہی بیٹی کوبچائیں گے، یہ ہندوستان کی سچائی ہے۔ راہل نے روزگارکے مسئلے پربھی مودی پرحملہ بولا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *