جے این ایم سی: ان وٹرو فرٹیلائزیشن تکنیک سے بچے کی کامیاب ولادت

JNMC
علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو)کے جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج کے شعبۂ امراضِ نسواں کے آئی وی ایف سینٹر میں ان وٹرو فرٹیلائزیشن( آئی وی ایف) تکنیک کی مدد سے دوسرے بچے نے پیدا ہوکر بانجھ پن اور اولاد کی مسرت سے محروم خواتین میں امید کی نئی کرن کی ترسیل کی ہے۔ جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج مغربی اتر پردیش کا واحد ہسپتال بن گیا ہے جو عام لوگوں کو بانجھ پن کے سستے علاج کی سہولیات مہیا کرا رہا ہے۔ جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج کے شعبۂ امراضِ نسواں نے آئی وی ایف عمل کے توسط سے ایک لڑکی کے بعد لڑکے کی دوسری کامیاب ولادت درج کی ہے۔ اس کے علاوہ تقریباً نصف درجن خواتین بھی علاج کے دوران اپنے سونے گھر آنگن میں معصوم کلکاریوں کی راہ دیکھ رہی ہیں۔
جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج کے شعبۂ امراضِ نسواں کے آئی وی ایف سینٹر کی کو آرڈینیٹرپروفیسر شاہین انجم نے بتایا کہ جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج کے آئی وی ایف سینٹر میں بھی ایمس کی طرز پر خواتین مریضاؤں کوعلاج کی سہولیات مہیا کرائی جا رہی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ بڑے شہروں اور پرائیویٹ ہسپتالوں کے مقابلے جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج کے آئی وی ایف سینٹر میں تقریباً پچاس فیصد شرح پر طبی سہولیات دستیاب ہو رہی ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ در اصل جن خواتین میں فیلوپین ٹیوب خراب ہو جاتی ہے وہ ماں بننے کی اہل نہیں ہوتی ہیں ایسے میں آئی وی ایف کے توسط سے ان کی ماں بننے میں مدد کی جاتی ہے۔
پروفیسر شاہین کا کہنا ہے کہ دورِ حاضر میں آئی وی ایف تکنیک بانجھ پن کو دور کرکے اولاد سے محروم افراد کے لئے امید کی ایک نئی کرن ہے۔ انہوں نے بتایا کہ جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج میں آئی وی ایف تکنیک کی مدد سے علاج وائس چانسلر پروفیسر طارق منصور، پرووائس چانسلر پروفیسر تبسم شہاب، میڈیسن فیکلٹی کے ڈین اورجواہر لعل نہرو میڈیکل کالج کے پرنسپل و سی ایم ایس پروفیسر ایس سی شرما، شعبۂ امراضِ نسواں کی سربراہ پروفیسر تمکین خاں کے علاوہ پروفیسر سیما حکیم، پروفیسر نور افشاں، پروفیسر امام بانو، پروفیسر نشاط اختر، پروفیسر زہرہ محسن، ڈاکٹر نسرین نور، ڈاکٹر شازیہ پروین، ڈاکٹر نازیہ عشرت، ڈاکٹر دالیہ رفعت اور ڈاکٹر دیبا کی کاوشوں اور تعاون سے ممکن ہوسکا۔
جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج میں آئی وی ایف تکنیک شروع کرنے میں فیڈریشن آف آبسٹیٹرکس اینڈ گائناکولوجی سوسائٹی آف انڈیا کے سربراہ پروفیسر جے دیپ ملہوترا، ڈاکٹر نریندر ملہوترا، ڈاکٹر کیشو ملہوترا، میڈیکل سپرنٹنڈنٹ پروفیسر حارث ایم خاں اور ڈپٹی ایم ایس پروفیسر فخر الہدیٰ کاسرگرم تعاون رہا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *