میگھالیہ سے پوری طرح ہٹا افسپا

army-file-photo
مرکزی وزارت داخلہ نے مسلح افواج کو خصوصی اختیارات فراہم کرنے والے قانون افسپا (آرمڈفورس اسپیشل پاور ایکٹ)کو میگھالیہ سے پوری طرح سے ہٹادیا ہے جبکہ اروناچل پردیش میں اس میں تھوڑی ڈھیل دی گئی ہے۔ وزارت داخلہ کی طرف سے پیر کو جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ میگھالیہ کے سبھی علاقوں سے یکم اپریل سے افسپا پوری طرح ہٹایا جاجارہا ہے۔ وہیں اروناچل پردیش کے 16 تھانہ حلقوں میں سے اب یہ صرف 8 میں ہی نافذ العمل رہے گا۔اس بیان کے ساتھ ہی بتایا گیا ہے کہ ستمبر 2017 تک میگھالیہ کا 40 فیصدی حصے میں افسپا نافذ تھا۔ حالانکہ ریاستی حکومت کے ساتھ تبادلہ خیال کے بعد میگھالیہ سے اس کو پوری طرح ہٹانے کا فیصلہ کیا گیا۔ادھر اروناچل پردیش کے تین مشرقی اضلاع ترپ ، لونگ ڈنگ اور چانگ لانگ میں اس خصوصی فوجی قانون کو چھ مہینے کیلئے بڑھادیا گیا ہے۔ یہ اضلاع میانمار کی سرحد سے متصل ہیں۔ وہیں ا?سام سے متصل سات دیگر اضلاع کے تحت آنے والے 8 تھانہ حلقوں میں اسے فی الحال نافذ رکھا گیا ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *