30ہزارکسان پیدل ناسک سے ممبئی پہنچے، آج اسمبلی کا گھیراؤ

kisan
مہاراشٹر کے ناسک سے شروع ہوا ’اکھل بھارتیہ کسان سبھا‘ کا مارچ قریب 200کلومیٹر کے پیدل سفرکے بعدآج ممبئی کے آزادمیدان پہنچاہے ۔قرض معافی کی مانگ کولیکرآج اسمبل گھیرنے کی بھی تیاری میں ہیں۔ بائیں محاذ کی ذیلی تنظیم اکھل بھارتیہ کسان سبھا کی قیادت میں ریاست بھر کے ہزاروں کسان اس مارچ میں شریک ہیں۔بتایاجارہاہے کہ اس مارچ میں 30ہزار سے زیادہ کسان شامل ہیں اور یہ حکومت کی ناکامی کے خلاف نعرے بلند کر رہے ہیں۔
حکومت کے خلاف مارچ کر رہے کسان مارچ میں شامل کسانوں کا مطالبہ ہے کہ ریاست کے کسانوں کو انکی پیداوار کا مناسب معاوضہ دیا جائے اور ان کا قرض معاف کیا جائے۔ آج یہ کسان ممبئی میں مہاراشٹر اسمبلی گھیراؤکریں گے اور حکومت پر دباؤبنائیں گے کہ حکومت ان کے مطالبات تسلیم کرے۔ کسانوں کا مطالبہ ہے کہ سوامی ناتھن کمیشن کی تمام سفاراشات لاگو کی جائیں۔ واضح رہے ویسے تو پورے ملک میں کسانوں کی حالت اچھی نہیں ہے لیکن مہاراشٹر میں کسانوں کی حلات اتنی خراب ہے کہ وہاں پر کسانوں کی خودکشی کرنے کی تعداد سب سے زیادہ ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *