ایم بی ایس الامن اسکول کے طلبہ و طالبات میں انعامات تقسیم

mbs
امبیڈکر نیشنل کانگریس کے قومی صدر نواب کاظم علی خاں باغپت کے گاؤں پانچھی میں قائم ایم بی ایس الامن اسکول کے چوتھے سالانہ تقریبمیں مہمان خصوصی طور پر شرکت کی اور طلبہ و طالبات میں انعامات و ایوارڈ تقسیم کی۔اپنے صدارتی خطاب میں انہوں نے کہا کہ حکومت ہند کو چاہئے کہ وہ تعلیم اور روزگار دینے کی سمت کام کریں اور لوگوں کو اس جانب متوجہ کریں ۔لیکن افسوس کے مٹھی بھر شر پسند عناصر پر بھی حکومت کنٹرول نہ کر سکتی ہے ۔دستور ساز با با بھیم راؤ امبیڈکر ،مہاتماگاندھی ،پریار کے مجسموں کو نقصان پہنچایا جا رہا ہے ۔مٹھی بھر شر پسند عناصر ہندوستان کی تہذیب کے دشمن بنے ہوئے ہیں اور پوری دنیا میں ہندوستان کو بدنام کرنے کا کام کررہے ہیں۔ہمارے مرکزی وزیر قانون اور وزیر داخلہ اس معاملہ میں بالکل خاموش ہیں ۔ان کی یہ خاموشی نا صرف ہندوستان بلکہ خود پارٹی کے لئے نقصاندہ ہے ۔

 

یہ بھی پڑھیں   نریش اگروال بی جے پی میں شامل،سماجوادی پارٹی کوبڑاجھٹکا

 

تین طلاق کے مسئلے نے مسلمانوں کو بی جے پی سے بہت بہت دور کردیا ہے ۔وہیں جی ایس ٹی کی وجہ سے تمام تجارتی طبقہ پارٹی سے سخت ناراض ہیں ۔نوٹ بندی اور جی ایس ٹی اور قانونی مداخلت یہ ایسے اقدام ہیں جس سے 2019کے لوک سبھا انتخاب میں پارٹی کا زوال یقینی ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ آئندہ وزیر اعظم ساؤتھ سے ہوگا اس کا انڈیکشن تیلگو دیشم اور ٹی آر ایس دے چکی ہے ۔تیلگو دیشم ممبران کا استعفی اس بات کا ثبوت ہے ۔آندھرا کی ترقی کے لئے کوئی ٹھوس اقدامات حکومت نہیں کررہی ہے جس سے ان کے اتحادیوں کا دور ہونا یقینی ہے ۔
اس موقع پر امبیڈکر نیشنل کانگریس کے آل انڈیا جنرل سکریٹری انیل بھیل نے کہا کہ صدیوں سے بابری مسجد میں مسلمان عبادت کرتے آرہے تھے ۔مسجد کو توڑ دینا اس بات کا ٹھوس ثبوت ہے کہ وہاں لوگ عبادت کیا کرتے تھے اور امبیڈکر نے جو دستور بنیا ہے اسی بنا پر اس مسجد کا تصفیہ عدالت اعلی سے ہونا چاہئے ۔اگر عدالت کے باہر کوئی سمجھوتہ ہوتا ہے تو ہندوستان کی دلت برادری بھی مہاتما بودھ گوتم بدھا کے لئے مندر بنانے کا مطالبہ کرتی ہے ۔امید ہے صدر جمہوریہ ہند دلت طبقے سے ہیں وہ گوتم بدھا سے عقیدت کے طور پر ہمیں بھی اس زمین کا حصہ دار بنا ئیں گیاور وہاں بھیم راؤ امبیڈکر کے نام سے مندر بنایا جائے ۔ایک دور میں ہندوستان میں بدھشٹ راج تھا ۔سنگھا پور میں وزیر اعظم نے بھی اس بات کو تسلیم کرتے ہوئے کہا تھا کہ ہندوستان گوتم بدھ کا استھان ہے ۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *