اسرائیلی وزیر اعظم سے پہلی مرتبہ پوچھ گچھ

اسرائیل کی ٹیلی مواصلات کی سب سے بڑے کمپنی بیزک سے متعلق بدعنوانی کے معاملہ میں آج پولیس نے پہلی بار وزیر اعظم بنیامین نیتن یاہو سے پوچھ گچھ کی ۔ اسرائیلی ریڈیو نےیہ اطلاع دیتے ہوئے بتایا کہ پولیس کا ماننا ہے کہ بیزک ٹیلی کام کے مالکوں نے اپنی ویب سائٹ پر مسٹر نیتن یاہو اور ان کی اہلیہ کو ان کی خواہش کے مطابق کوریج دیاتھا۔ اس کے عوض میں مسٹر نیتن یاہو نے ٹیلی مواصلات کے قوانین میں تبدیلی کرکے کمپنی کو فائدہ پہنچایا۔
مسٹر نیتن یاہو پہلے ہی بدعنوانی کے دو معاملوں میں شک کے دائرے میں ہیں، لیکن انہوں نے کچھ بھی غلط کرنے سے انکار کیا ہے۔ پولیس کے ترجمان نے اس بارے میں کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے، لیکن رائٹر کے فوٹوگرافر نے دو پولیس اہل کار اور ایک گاڑی کو نتن یاہو کی سرکاری رہائش گاہ میں جاتے ہوئے دیکھا ہے۔
اسرائیلی وزیر اعظم سے پہلی مرتبہ ہوئی اس پوچھ گچھ کی وجہ سے اب نتن یاہو کا سیاسی کیریئر بھی بحران کا شکار ہوتا ہوا نظرآہا ہے ۔ واضح رہے کہ اس سے قبل اسرائیل میں ان کے خلاف کئی مرتبہ مظاہرے بھی کئے جاچکے ہیں ۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *