بابری مسجد سے متلعق طلباکے سوال پر روپڑےمولاناسلمان ندوی

maulana-nadwi
بابری مسجد-رام مندرجنم بھومی تنازعہ معاملے پرآل انڈیامسلم پرسنل لاء بورڈ سے نکالے جانے کے بعد مولاناسلمان ندوی ایک سوال کا جواب دیتے دیتے روپڑے۔بتایاجارہاہے کہ لکھنؤ میں واقع وہ مشہوراسلامی یونیورسٹی ندوۃ العلماء میں کلاس لینے پہنچے تھے۔ان سے وہاں طلبانے بابری مسجد کی زمین مندرکیلئے دینے کے معاملے پرسوال کئے ،اس کے جواب دیتے ہوئے مولاناسلمان ندوی جذباتی ہوگئے اوررونے لگے۔بتایاجاتاہے کہ طلبانے مولاناندوی سے سوال کیاکہ رام مندرمعاملے پرآپ کے ساتھ ایساکیوں ہوا؟تومولاناسلمان ندوی خودکوسنبھال نہیں پائے اوران کے آنسوچھلک اٹھے۔
خیال رہے کہ حال ہی میں مولانا سلمان ندوی نے سری سری روی شنکرسے ملاقات میں متنازعہ زمین پررام مندر بنانے اورمسجدکودوسری جگہ شفٹ کرنے کا فارمولہ دیا تھا، جس کے بعدانہیں مسلم پرسنل لاء بورڈ سے باہرکردیاگیاتھا۔

 

یہ بھی پڑھیں   دہرادون کے ایک مسلم خاندان نے مثال پیش کی
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *