دہلی میں پھرحیوانیت،سوٹ کیس میں ملی معصوم کی لاش

murder-ashish
دہلی کے سوروپ نگرعلاقے سے اغواایک سات سال کے بچے کے بارے میں دل دہلا دینے والا خلاصہ ہواہے۔دراصل آشیش نامی بچے کوکرائے داراودھیش نے 7جنوری کوگھرکے پاس کھیلتے وقت اغواکرلیاتھا۔ بتایاجارہاہے کہ اس نے بچے کوسائیکل دلانے کا لالچ دیا اوراغوا کرکے کرائے کے کمرے میں قتل کردیا۔حیرت کی بات یہ بھی ہے کہ اس نے قتل کے واردات کوانجام دینے کے بعد اس نے لاش کوپالی تھن میں پیک کرکے سوٹ کیس میں رکھ دیا۔ کمرے میں کچھ مرے ہوئے چوہے بھی رکھ دےئے۔ پڑوسیوں کوجب بدبوآتی تھی توکہتا تھا کہ گھرکے اندرچوہامراہواہے۔بدبوکم کرنے کیلئے اس نے کمرے میں بہت سے پرفیوم رکھے ہوئے تھے، جووقت وقت پرڈیڈ باڈی پرچھڑکتاتھا۔
شمال مغربی دہلی کے دپٹی پولس کمشنراسلم خان نے بتایاکہ سات سال کا آشیش گذشتہ سات جنوری سے لاپتہ تھا۔منگل کی صبح آشیش کی لاش ناتھوپوراگاؤں میں ایک سوٹ کیس میں ملی۔سوٹ کیس کے توسط سے پولس نے ملزم کرائے داراودھیش شاکیاکوگرفتارکرلیاہے۔

 

یہ بھی پڑھیں  بچیوں کی عصمت دری کا جاری رہنا شرمناک

 

شروعات جانچ میں پولس کوپتہ چلاہے کہ ملزم دیررات تک پارٹی کرنے کاشوقین تھا۔کرائے دارکی ان عادتوں پرآشیش کے اہل خانہ کواعتراض تھا جس کے بعدباعث دونوں کے درمیان نونک جھونک ہوئی تھی۔ملزم نے پولس کوبتایاکہ آشیش اس سے گھلاملاتھا ا وراسے انکل کہتاتھا آشیش کواس کے اہل خانہ ان سے نہیں ملنے دیتے تھے۔ پولس نے بتایاکہ ملزم تین باریوپی ایس سی کاتحریری امتحان دے چکاہے۔پولس کے مطابق، ملزم نے اغواکرتے ہی اس کا قتل کردیاتھا۔بہرکیف پولس مزیدجانچ کررہی ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *