ہندوستانی اردومیڈیااوربنگلہ دیشی میڈیامیں باہمی تعاون کی بات ہائی کمشنرنے کی

High-Commissioner
بنگلہ دیش کے ہائی کمشنرسیدمعظم علی نے بنگلہ دیش اوراردومیڈیا کے درمیان روابط کوبڑھانے اورایک دوسرے سے واقفیت حاصل کرنے کیلئے میکانزم بنانے پرزوردیا۔ پریس کلب آف انڈیا کے زیراہتمام اردومیڈیاکے ساتھ غیررسمی ملاقات میں انہو ں نے ہند-بنگلہ دیش تعلقات کے حوالے سے کہاکہ مختلف میدانوں میں دوطرفہ تعلقات کیلئے سب سے بہترین دور ہے۔توانائی، سڑک روابط ، تجارتی واقتصادی شعبوں میں ہم تعاون کی بہت سی شکلیں بنائی ہیں اوربلاشبہ ہندوستان کا اس میں اہم کردارہے۔ انہو ں نے اعتراف کیاکہ بنگلہ دیش ہندوستان کے پانی پربہت منحصرہے، انرجی کے میدان میں بھی ممکن حدتک مددکی ہے۔
ہائی کمشنرنے ہندوستان اوربنگلہ دیش کے رشتوں کوتاریخ کے سب سے سنہرے دورکے رشتوں سے تعبیرکرتے ہوئے کہاکہ ہندوستان اوربنگلہ دیش سب سے بہتردورمیں ہیں۔انہوں نے بنگلہ دیش سرکارکے ذریعہ خودکودوسری بارہندوستان کا ہائی کمشنربنائے جانے پرخوشی کا اظہارکرتے ہوئے کہاکہ یہ ان کے لئے فخرکالمحہ ہے ،جب ہندوستان اوربنگلہ دیش کے بیچ زمین تنازع سے متعلق سبھی معاملے کوحل کرلیاگیا۔
ویزاسے متعلق بات کرتے ہوئے انہو ں نے کہاکہ ویزامعاملے میں بھی ہم کافی بہتری کی کوشش کررہے ہیں تاکہ دونوں ملکوں کے لوگ ویزاکے پریشانیوں سے آزادہوکرایک دوسرے کے یہاں آمدورفت کرسکیں اورموجودہ وقت میں لانگ ٹرم ویزاان کی پہلی کوشش ہے، جوکچھ لوگوں کومل بھی رہاہے۔
ہائی کمشنرنے کہاکہ سرحدی تنازع نے عزت مندانہ حل کوہم سب سے بڑی حصولیابی کہہ سکتے ہیں۔انہو ں نے انکشاف کیاکہ اس وقت دس لاکھ سے زائدروہنگیائی مہاجرین بنگلہ دیش کے پناہ گزیں کیمپوں میں موجودہیں۔عالمی اداروں اورممالک کی مددسے بنگلہ دیش حتی الامکان ان کی ضرورت اورمشکلات ختم کرنے کی کوششوں میں مصروف ہے۔انہو ں نے کہاکہ ہم عوام کے درمیان رابطے بڑھانے پرزوردے رہے ہیں۔کولکاتہ اوراگرتلہ سے ٹرین سروس کے ذریعہ ڈھاکہ جایاجاسکتاہے۔تیستامعاہدہ ہماری ترجیحات میں ہے، مستقبل میں بھی دونوں ممالک کے تعلقات میں اوراستحکام واعتماد پیداہوگا۔
بنگلہ دیش ہائی کمیشن کی طرف سے پہلی مرتبہ اردو میڈیاکے ساتھ روابط کی یہ پہلی سنجیدہ کوشش تھی جس میں سرکردہ اردواخبارات اورنیوزپورٹل سے وابستہ سینئرصحافی ،مدیران وغیرہ موجودتھے۔پریس کلب انتظامی کمیٹی کے ممبراورسینئرصحافی’چوتھی دنیا‘کے اے یوآصف نے آغاز میں مختصرتعارفی کلمات پیش کئے اورمیٹنگ کومفیدوثمرآوربنانے کی ضرورت پرزوردیا۔ پریس کلب آف انڈیاکے صدرگوتم لہری نے کہاکہ وہ چاہتے ہیں کہ اردومیڈیا پریس کلب میں اپنی بھرپورنمائندگی اورموجودگی کا احساس کرائے،اسے پوراموقع فراہم کیاجائے گا۔ انہوں نے کہاکہ اردومیڈیاکواپنی طاقت بڑھانی چاہئے۔یہ میٹنگ اس احساس کا مظہرہے۔ پریس کلب کے سابق جنرل سکریٹری ندیم کاظمی کے علاوہ موجودہ سکریٹری ونے کماروغیرہ موجودتھے، جبکہ سیدمعظم علی کے علاوہ ڈپٹی کمشنروسفارتخانہ کے دیگراہلکاربھی موجودتھے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *