لالویادوکوآج بھی سزانہیں سنائی گئی

lalu-prasad-yadav
چارہ گھوٹالے معاملے میں قصوروارپائے گئے راشٹریہ جنتادل کے سربراہ اورسابق بہارکے وزیراعلیٰ لالوپرسادیادوآج 4جنوری کوسزاسنائی جانی تھی۔لیکن کورٹ کے دووکیلوں کے اچانک انتقال ہونے کی وجہ سے گزشتہ کل اورآج سزاکااعلان نہیں ہوسکا۔اسلئے آج لالوکی سزاٹل گئی اورکل یعنی 5جنوری کوسزاسنائی جاسکتی ہے۔
اس بیچ رانچی کی خصوصی سی بی آئی عدالت کے جج شیوپال سنگھ نے بڑاخلاصہ کیاہے۔انہو ں نے بتایاکہ لالوپرسادکے دولوگوں نے انہیں فون کیاتھا۔حالانکہ یہ دونوں لالوحمایتی تھے یاکوئی لیڈر،جج نے اس کی جانکاری نہیں دی۔
سنوائی کے وقت رانچی سی بی آئی عدالت کے جج نے لالوسے کہاکہ آپ کی کئی سفارشیں مجھ سے کی گئی ہیں۔جج نے لالوسے کہاکہ آپ کیلئے میرے پاس کئی لوگوں نے سفارشیں کی ہیں، لیکن فکرکرنے کی ضرورت نہیں ہے۔میں صرف قانون پرعمل کروں گا۔
یہ بھی بتایاجاتاہے کہ سنوائی کے دوران سی بی آئی کے خصوصی جج شیوپال سنگھ نے کہاکہ لالوکے حمایتی انہیں فون کرکے پوچھتے ہیں کہ کیاہوگا! ۔اس پرآرجے ڈی لیڈرشوانندتیواری نے کہاہے کہ اگرایساہے توجج کواس معاملے کی شکایت کرنی چاہئے تھی۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *