اے ایم یومیں شامِ نظم خوانی کا انعقاد

physically-challanged-student
یکم دسمبر کوعلی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) کے شعبۂ انگریزی کے زیرِ اہتمام’’ تبدیلی کے علمبردار ہزار وں شعراء‘‘ تنظیم اور کلچرل ایجوکیشن سینٹر کے ہابیز کلب کے مشترکہ تعاون سے شامِ ’’ نظم خوانی کا انعقاد کیا گیا جس کا موضوع عالمی یومِ معذورین تھا۔اس موقع پر مختلف زبانوں کے شعبوں کے طلبہ نے موضوع پر اپنی خود ساختہ نظمیں پیش کیں جس کا مقصد معذوروں کے تئیں بیداری پیدا کرنا تھا۔شعبۂ انگریزی کی استاد محترمہ علیشا ابکار نے مہمانان کا خیر مقدم کرتے ہوئے تنظیم کے مقاصد اور پروگرام کے موضوع پر تفصیل سے روشنی ڈالی۔
شعبۂ انگریزی کے ہی مسٹر بھوپتی پی نے ادب میں معذور ین کے موضوع پر روشنی ڈالتے ہوئے نظم خوانی کی اہمیت کو اجاگر کیا۔ انہوں نے کہا کہ ادب میں عموماً معذوروں کو ہمدردی کا مستحق بناکر پیش کیا جاتا رہا ہے جس میں تبدیلی کے اشارے مل رہے ہیں۔پروگرام میں محترمہ علیشا ابکار نے معذور شعراء کی چار نظمیں پیش کیں۔ اس کے علاوہ تیس سے زائد طلبہ و طالبات اور اساتذہ نے اس موقع پر خود ساختہ نظمیں پیش کیں۔ پروفیسر ثمینہ خاں اور ڈاکٹر عائشہ منیرہ رشید نے بھی اپنی نظمیں پیش کیں۔ ڈاکٹر سدھارتھ چکر ورتی نے حاضرین کا شکریہ ادا کیا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *