پاکستان میں بھی مدارس فوج کے نشانے پر

army-chief-pakistan-qamar-javed
مدرسوں کے تعلق سے پاکستان کے چیف آرمی جنرل قمرجاویدنے ایک تیکھی تنقیدکی ہے۔انہو ں نے کہاکہ اسلامی تعلیم دینے والے زیادہ ترمدرسوں کی تصورپرایک بارپھردھیان دینے ہوگا۔ان مدرسوں میں پڑھنے والے بچے یامولوی بنیں گے یاپھردہشت گرد۔اس کے علاوہ اورکئی آپشن نہیں ہے۔
’نیوز18انڈیا‘کے مطابق، پاکستان کے معروف اخبار’ڈان‘نے باجواکے بیان کے حوالے سے چھپی خبرمیں یہ بات کہی گئی ہے۔بلوچستان کے مشہورشہرکویٹامیں ایک یوواسمیلن میں انہوں نے کہا’’میں مدرسوں کے خلاف نہیں ہوں،لیکن مدرسوں کی اصل احساس کہیں کھوگئی ہے۔پاکستان میں مدرسوں کی تعلیم غیرمعمولی ہے،کیونکہ یہ طلباکوجدیددنیاکیلئے تیارنہیں کرتی ہے۔مدرسوں میں قریب 25لاکھ بچے پڑھتے ہیں ،لیکن وہ کیابنیں گے؟کیاوہ مولوی بنیں گے یادہشت گردبنیں گے؟‘‘ان کا کہناہے کہ ملک میں اتنے طلباکوتقررکرنے کیلئے نئی مسجدیں کھولناممکن نہیں ہے۔پاکستان کے مدرسوں پراکثرالزام لگتاہے کہ وہ نوجوانوں کومتشددبنارہے ہیں، لیکن یہ بھی سچ ہے کہ ملک میں لاکھوں غریب بچوں کے پاس مدرسوں کے علاوہ تعلیم کاکوئی دوسراذریعہ تک نہیں ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *