کانگریس کوبڑاجھٹکا،میگھالیہ اسمبلی سے 5کانگریس سمیت 8ممبران کا استعفیٰ

meghalay
ریاست میں میگھالیہ میں برسراقتدارکانگریس کوایک اوربڑاجھٹکالگاہے۔ریاست میگھالیہ میں پانچ کانگریس ایم ایل اے نے رکنیت سے استعفیٰ دیاہے۔استعفیٰ دینے والوں رکن اسمبلیوں میں ریاست کے ڈپٹی سی ایم روویل لنگدوہ بھی شامل ہیں۔ان کے علاوہ یونائٹیڈڈیموکریٹک پارٹی کے ایک اوردوآزادرکن اسمبلیوں نے استعفیٰ دے دیاہے۔
کانگریس کے بڑے لیڈرآرلنگدوہ نے بعدمیں اعلان کیا اوربتایاکہ استعفیٰ دینے والے آٹھوں رکن اسمبلی اگلے ہفتے ایک ریلی کے بعدنیشنل پیپلس پارٹی جوائن کرنے کافیصلہ کیاہے۔میگھالیہ اسمبلی میں 60میں سے 30ممبران کانگریس کے ہیں،ان میں سے پانچ کے استعفیٰ دینے کے بعد25ممبران بچے تھے۔اسمبلی کے پرنسپل سکریٹری اینڈروسمنس نے بتایاکہ اسپیکرآج چھٹی پرہیں اسلئے 8رکن اسمبلیوں نے اپنا استعفیٰ مجھے سونپاہے۔آج دورے پرہونے کی وجہ سے اسپیکراپنے آفس میں نہیں تھے۔
واضح رہے کہ 28دسمبرکوایک اورکانگریس رکن اسمبلی پی این سےئم نے استعفیٰ دیاتھا،اس کے ساتھ کانگریس کے صرف 24رکن اسمبلی بچے ہیں۔عیاں رہے کہ میگھالیہ میں اگلے ہی سال انتخابات ہونے والے ہیں۔
قابل غورہے کہ چھتیس گڑھ میں بھی آل انڈیاکانگریس کمیٹی کے ترجمان اورسابق ایم پی دیوورت سنگھ کانگریس کی رکنیت سے استعفیٰ دیاہے ۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *