اسٹنٹ کرتے ہوئے 62 منزلہ عمارت سے گرکرنوجوان کی موت

stunt
چین کے ایک سوشل میڈیااسٹارکی ایک ڈیئرڈیول اسٹنٹ کرتے ہوئے 62منزلہ عمارت سے گرنے سے موت ہوگئی۔وویانگنگ نے بناکسی حفاظتی بندوبست کے اونچی اونچی عمارتوں پراسٹنٹ کے شارٹ ویڈیوشیئرکرکے فیس بک کی طرزپربنے چینی سوشل میڈیااپلی کیشن ’وی بو‘پرلاکھوں فالورس بنالئے تھے۔وویانگنگ نے اسی سال فروری میں ویڈیوپوسٹ کرنے شروع کئے تھے اورخطرناک اسٹنٹ کرتے ہوئے اب تک 300شارٹ ویڈیوشیئرکئے تھے۔دنیابھرمیں حال کے سالوں میں اونچی سے اونچی عمارتوں پرچڑھ کراسٹنٹ کرنے والوں کی تعدادمیں اضافہ ہواہے۔وویانگنگ بھی ان میں سے ہی ایک تھے۔وویانگنگ کی گرل فرینڈجی جی نے سوشل میڈیاپریہ جانکاری دی کہ چین میں 62منزلہ ہوایوآن سینٹر سے اسٹنٹ کرتے گرکروویانگنگ کی موت ہوگئی ہے۔
وویانگنگ کے خاندان والوں نے بتایاکہ وہ ’روپ ٹاپنگ‘چیلنجزمیں حصہ لے کرایک لاکھ ’یوآن‘ کماناچاہتے تھے تاکہ وہ اپنی گرل فرینڈکوشادی کیلئے پرپوزکرسکیں۔وو کے ایک رشتے دارنے ساؤتھ چائنامارکیٹنگ پوسٹ کوبتایاکہ وو کوشادی کیلئے پیسوں کی ضرورت تھی، اس کے علاوہ وہ اپنی بیمارماں کاعلاج بھی کراناچاہتے تھے۔
دراصل ،چین کا ایک ویڈیوان دنوں سوشل میڈیاپرتیزی سے وائرل ہورہاہے،جس میں ایک شخص اسٹنٹ کرنے کیلئے ایک عمارت کی 62ویں منزل پرپہنچ گیا۔اسٹنٹ کرنے کے دوران وہ وہاں سے گرپڑااوراس کی موت ہوگئی ۔یہ پوراواقعہ ایک ویڈیومیں قیدہوگیا،جوانٹرنیٹ پرتیزی سے وائرل ہورہاہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *