اے ایم یو وائس چانسلرنے’ لو وژن ایڈ کلینک‘ کا افتتاح کیا

Low-Vision-Aid-Clinic
علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) کے جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج( جے این ایم سی) کاانسٹی ٹیوٹ آف اپتھلمولوجی زیادہ کم بینائی رکھنے والے افراد اور بچوں کے لئے امید کی ایک نئی کرن لے کر آیا ہے جہاں کم بینائی والوں کو گیجیٹس و مخصوص چشموں سے بینائی کا اہل بنایا جا سکے گا۔علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر طارق منصور نے کم بینائی کے حامل افراد کے علاج کے لئے انسٹی ٹیوٹ آف اپتھلمولوجی کی او پی ڈی میں’’ لو وژن ایڈ کلینک‘‘ کا افتتاح کیا جس میں مریضوں کی ہر روز جانچ کی جائے گی۔اس موقع پر منعقدہ ایک پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے پروفیسر طارق منصور نے کہا کہ اے ایم یو کے انسٹی ٹیوٹ آف اپتھلمولوجی کی تاریخ جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج سے بھی قدیم ہے اور اس کا شمار ملک کے باوقار امراضِ چشم کے اداروں میں کیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ’’ لو وژن ایڈ کلینک‘‘ کے شروع ہونے سے ان لوگوں کو بہت فائدہ پہنچے گا جو کافی کم بینائی کے سبب نا امیدی کی زندگی بسر کر رہے ہیں۔وائس چانسلر نے کہا کہ ان کی ہمیشہ یہ کوشش رہی ہے کہ جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج میں مریضوں کو سستی اور اعلیٰ معیاری طبی سہولیات مہیا کرائی جائیں۔ پروفیسر منصور نے توقع ظاہر کی کہ انسٹیٹیوٹ آف اپتھلمولوجی دیگر میدانوں میں بھی ماہرانہ طبی سہولیات مہیا کرائے گا۔
میڈیسن فیکلٹی کے ڈین اور جے این میڈیکل کالج کے پرنسپل و سی ایم ایس پروفیسر ایس سی شرما نے کہا کہ حال ہی میں امراض چشم کے علاج کے میدان میں انقلابی تحقیقی کام ہوئے ہیں اور یہ امرباعثِ افتخار ہے کہ جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج کا انسٹیٹیوٹ آف اپتھلمولوجی مریضوں کو جدید ترین طبی سہولیات مہیا کرا رہا ہے۔ انہوں نے لو وژن ایڈ کلینک شروع کرنے پر انسٹی ٹیوٹ آف اپتھلمولوجی کو مبارکباد پیش کی۔انسٹی ٹیوٹ آف اپتھلمولوجی کے سربراہ پروفیسر سید ناصر عسکری نے ان کے شعبہ کے زیرِ اہتمام او پی ڈی میں میہا کرائی جا رہی سہولیات کے بارے میں بتایا۔
’’ لو وژن ایڈ کلینک‘‘ کے انچارج ڈاکٹر عبدالوارث نے بتایا کہ یہ کلینک ان افراد کے لئے بے حد سود مند ثابت ہوگا جو کنہیں وجوہات کی بنا پر تقریباً معذور ہوگئے ہیں اور ان کی آنکھوں میں بہت ہی کم روشنی باقی رہ گئی ہے۔انہوں نے کہا کہ ان میں پیدائشی طور پر معذور بچوں کا بھی علاج ہوگا۔ ڈاکٹر وارث نے بتایا کہ امریکہ کی ایک غیر سرکاری تنظیم نے غریب مریضوں کو گیجیٹس اور مخصوص قسم کے چشمے مہیا کرانے کے لئے مدد کی یقین دہانی کرائی ہے۔ ڈاکٹر عبدالوارث نے بتایا کہ شمالی ہندوستان کے کسی بھی سرکاری میڈیکل کالج میں یہ کلینک خود میں پہلا کلینک ہوگا جہاں کم بینائی والوں کو یہ سہولت مہیا کرائی جائے گی۔اس موقع پر میڈیکل سپرنٹنڈنٹ پروفیسر حارث ایم خاں، پروفیسر آر مہیشوری، پروفیسر آر آر سُکُل، پروفیسر شمیم احمد، پروفیسر یوگیش گپتا، پروفیسر ادیبہ عالم خاں اور ڈاکٹر ضیاء صدیقی وغیرہ موجود تھے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *